رسائی کے لنکس

جارجیا: افغان فوجی مشن میں تعاون جاری رکھنے کی یقین دہانی


جارجیا کے وزیر دفاع آئرک لی السانیا

جارجیا کے وزیر دفاع آئرک لی السانیا

جارجیا نے 2009 میں نیٹو کے افغان مشن میں شمولیت کی تھی اور اس کے بعد سے جارجیا کے 18 فوجی ہلاک ہوچکے ہیں۔

جارجیا کی نومنتخب حکومت نے کہاہے کہ وہ افغانستان میں نیٹو کے ساتھ اپنی تعاون جاری رکھے گی۔

جارجیا کے فوجی دستے افغانستان میں نیٹو کے پرچم تلے موجود غیر ملکی افواج کا ایک اہم حصہ ہیں اور اپنی آبادی اور رقبے کے لحاظ سے افغانستان میں تشدد کے واقعات میں ہلاک ہونے والے جارجیا کے فوجیوں کی تعداد سب سے زیادہ ہے۔

جارجیا نے 2009 میں نیٹو کے افغان مشن میں شمولیت کی تھی اور اس کے بعد سے جارجیا کے 18 فوجی ہلاک ہوچکے ہیں۔

جارجیا کے سات فوجی رواں سال میں ہلاک ہوئے ہیں۔

افغانستان میں جارجیا کے فوجیوں کی کل تعداد 1570 ہے ۔

کوہ قاف کے علاقے میں واقع اس ملک کی آبادی 45 لاکھ کے لگ بھگ ہے۔ اپنی آبادی کے لحاظ سے جارجیا نیٹو کو افغان مشن کے لیے اپنے فوجی فراہم کرنے والا سب سے بڑا ملک ہے۔

جارجیا کے زیادہ تر فوجی افغان صوبے ہلمند میں تعینات ہیں جب کہ اس کے چند درجن فوجی کابل کی حفاظت پر مامور ہیں۔

جارجیا کے نئے وزیر دفاع آئرک لی السانیا نے حال ہی میں افغانستان میں اپنے فوجیوں، نیٹو اور افغان عہدے داروں سے ملاقاتیں کی تھیں۔ ان کا کہناتھا کہ 2014 کے بعد ، جب زیادہ تر غیرملکی فوجی افغانستان سے چلے جائیں گے، جارجیا افغان سیکیورٹی فورسز کو تربیت فراہم کرنے کے لیے تیار ہے۔
XS
SM
MD
LG