رسائی کے لنکس

افغانستان میں سینئر سرکاری وکیل کا قتل


فائل فوٹو

فائل فوٹو

پکتیا صوبائی چیف پراسکیوٹر نجیب اللہ سلطان زئی کو اُس وقت گولی مار کر ہلاک کر دیا جب وہ جمعرات کی شپ دستک کے بعد اپنے گھر کا دروازہ کھولنے گئے۔

افغانستان میں ایک سینیئر سرکاری وکیل کو دارالحکومت کابل میں قتل کر دیا گیا۔

پاکستانی سرحد کے قریب افغان صوبے پکتیا سے تعلق رکھنے والے افغان قانون ساز مجیب اللہ رحمان نے جمعہ کو بتایا کہ صوبائی چیف پراسیکیوٹر نجیب اللہ سلطان زئی کو اُس وقت گولی مار کر ہلاک کر دیا جب وہ جمعرات کی شپ دستک کے بعد اپنے گھر کا دروازہ کھولنے گئے۔

طالبان نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

افغانستان میں عدلیہ سے تعلق رکھنے والے عہدیداروں پر حملوں میں تیزی آئی ہے۔

اٹارنی جنرل کے دفتر میں کام کرنے والے ملازمین کو لانے اور لے جانے والی بسوں پر رواں ماہ تین حملے ہو چکے ہیں۔

دریں اثناء افغان عہدیداروں کے مطابق صوبہ ننگر ہار میں جمعرات کی شب ایک گاڑی پر مبینہ امریکی ڈرون حملے میں پانچ مشتبہ جنگجو مارے گئے۔

امریکی عہدیداروں کی طرف سے اس بارے میں کوئی بیان سامنے نہیں آیا ہے۔

XS
SM
MD
LG