رسائی کے لنکس

افغانستان: فوجی ہیلی کاپٹر کے حملے میں چھ سکیورٹی اہلکار ہلاک


فائل فوٹو

فائل فوٹو

یہ واقعہ ایک ایسے وقت پیش آیا ہے کہ جب گزشتہ بدھ کو ہی مشرقی صوبہ ننگرہار میں امریکی فورسز کے فضائی حملے میں کم ازکم 18 افراد مارے گئے تھے اور افغانستان میں اقوام متحدہ کے مشن کے مطابق مرنے والے عام شہری تھے۔

افغانستان کے مغربی صوبے فرح میں افغان فوجی ہیلی کاپٹر کے حملے میں پانچ افغان فوجی اور ایک پولیس اہلکار مارا گیا۔

وزارت دفاع نے ہفتہ کو ایک بیان میں بتایا کہ "زمینی فورسز کی طرف سے فراہم کی گئی غلط معلومات پر" ہیلی کاپٹر نے جمعہ کو دیر گئے یہ کارروائی کی تھی۔

بیان کے مطابق بالا بلک ضلع میں عسکریت پسندوں کے حملے کی زد میں آنے والی فورسز نے فضائی مدد بلائی تھی۔ لیکن غلطی سے ہیلی کاپٹر نے افغان سکیورٹی فورسز کی ایک چوکی پر راکٹ داغ دیا۔

حکام کے بقول واقعے کی تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں۔

یہ واقعہ ایک ایسے وقت پیش آیا ہے کہ جب گزشتہ بدھ کو ہی مشرقی صوبہ ننگرہار میں امریکی فورسز کے فضائی حملے میں کم ازکم 18 افراد مارے گئے تھے اور افغانستان میں اقوام متحدہ کے مشن کے مطابق مرنے والے عام شہری تھے۔

غلطی معلومات کی بنیاد پر فضائی حملوں کے واقعات پہلے بھی جنگ سے تباہ حال اس ملک میں پیش آ چکے ہیں۔

دریں اثنا جنوبی صوبہ ہلمند میں سڑک میں بم پھٹنے سے کم ازکم 11 شہری مارے گئے۔

حکام کے مطابق یہ افراد ایک گاڑی پر سوار جا رہے تھے کہ ان کی گاڑی بم کی زد میں آگئی۔ مرنے والوں میں دو خواتین اور چار بچے بھی شامل ہیں اور یہ سب ایک ہی خاندان سے تعلق رکھتے تھے۔

اس حملے کی ذمہ داری تو کسی نے قبول نہیں کی لیکن عسکریت پسند سڑک میں نصب دیسی ساختہ بموں کے ذریعے سکیورٹی فورسز کو نشانہ بناتے رہے ہیں۔

XS
SM
MD
LG