رسائی کے لنکس

بنگلہ دیش: شدت پسندی کے الزام میں چار پاکستانی گرفتار


فائل

فائل

منیر الاسلام کے مطابق گرفتار افراد کے قبضے سے پولیس نے جہادی لٹریچر، سی ڈیز، چار پاکستانی پاسپورٹ، موبائل فون اور ہزاروں پاکستانی روپے برآمد کیے ہیں۔

بنگلہ دیش میں پولیس نے شدت پسندی میں ملوث ہونے کے شبہ میں چار پاکستانیوں سمیت سات افراد کو حراست میں لے لیا ہے۔

ڈھاکہ پولیس کے ایک اعلیٰ افسر منیرالاسلام نے اتوار کو صحافیوں کو بتایا کہ ملزمان کو دارالحکومت ڈھاکہ کے ہوائی اڈے کے نزدیک سے گرفتار کیا گیا ہے اور شبہ ہے کہ ان کا تعلق کالعدم شدت پسند تنظیم 'جماعت المجاہدین بنگلہ دیش' سے ہے۔

منیر الاسلام کے مطابق گرفتار افراد کے قبضے سے پولیس نے جہادی لٹریچر، سی ڈیز، چار پاکستانی پاسپورٹ، موبائل فون اور ہزاروں پاکستانی روپے برآمد کیے ہیں۔

پولیس افسر نے دعویٰ کیا کہ گرفتار پاکستانی شہری بنگلہ دیش میں دہشت گردوں کی مالی معاونت کے لیے جعلی کرنسی کا کاروبار کرتے تھے۔

انہوں نے کہا کہ پولیس کو شبہ ہے کہ تمام گرفتار شدگان جماعت المجاہدین کے سرگرم ارکان ہیں جو دہشت گرد حملوں اور اپنے نیٹ ورک کو مزید موثر بنانے کی منصوبہ بندی کے لیے ہوائی اڈے کےنزدیک ایک عمارت میں جمع ہوئے تھے جس پر پولیس نے چھاپہ مارا۔

پولیس افسر نے کہا کہ ملزمان سے تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے اور پولیس یہ جاننے کی کوشش کر رہی ہے کہ آیا ان افراد کا بنگلہ دیش میں ہونے والے حالیہ حملوں اور بلاگرز کے قتل میں بھی کوئی ہاتھ تھا۔

منیر الاسلام کے مطابق چاروں گرفتار پاکستانیوں کے پاس موجود پاسپورٹ موثر ہیں جن سے ظاہر ہوتا ہے کہ ان کا بنگلہ دیش آنا جانا لگا رہتا تھا۔

XS
SM
MD
LG