رسائی کے لنکس

جنوبی کوریا: ساحلی محافظ کی فائرنگ سے چینی ماہی گیر ہلاک


فائل فوٹو

فائل فوٹو

حکام کا کہنا ہے کہ 45 سالہ مچھیرے کو گولی لگنے کے بعد ہیلی کاپٹر کے ذریعے اسپتال لایا گیا جہاں وہ جمعہ کو زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہوگیا۔

جنوبی کوریا کے ایک ساحلی محافظ نے گولی مار کر ایک چینی ماہی گیر کو ہلاک کردیا۔

حکام کے مطابق ماہی گیر غیر قانونی طور پر جنوبی کوریا کے پانیوں میں مچھلیاں پکڑ رہا تھا اور جب اسے گرفتار کرنے کی کوشش کی گئی تو اس نے مذاحمت کی جس پر محافظ نے فائرنگ کردی۔

جنوبی کوریا کے جنوب مغربی علاقے موکپو میں اسپتال کے حکام کا کہنا ہے کہ 45 سالہ مچھیرے کو گولی لگنے کے بعد ہیلی کاپٹر کے ذریعے اسپتال لایا گیا جہاں وہ جمعہ کو زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہوگیا۔

تاحال یہ واضح نہیں ہوسکا کہ بحیرہ زرد میں پیش آنے والے اس واقعے میں کوئی شخص زخمی بھی ہوا یا نہیں۔ یہ سمندر دونوں ملکوں کے درمیان واقع ہے۔

چینی ماہی گیروں اور جنوبی کوریا کے ساحلی محافظوں کے درمیان اس طرح کی تلخ کلامی اور جھڑپ کوئی غیر معمولی بات نہیں اور اسی بنا پر ماضی میں بھی دونوں ملکوں کے تعلقات کشیدہ ہوچکے ہیں۔

چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان ہونگ لئی کا کہنا ہے کہ ان کی حکومت اس واقعے پر "سخت رنجیدہ" ہے اور اس پر جنوبی کوریا سے احتجاج بھی کیا گیا ہے۔

دو سال قبل ایک ایسے واقعے کے بعد بیجنگ نے سیول پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ یہ جنوبی کوریا کی طرف سے "قانون کے نفاذ کا پرتشدد" طریقہ ہے۔"

XS
SM
MD
LG