رسائی کے لنکس

گھوڑوں کے کام کے اوقات کا تعین ہوگا، وہ شدید گرمی یا سردی میں کام نہیں کریں گے، اور مقررہ اوقات پر اُن کا معالجوںٕ سے باضابطہ چیک اپ کرایا جائے گا۔ علاوہ ازیں، ایک گھوڑے کو سال میں پانچ ہفتوں کی ’تعطیل‘ ہوگی، اور لازم ہے کہ اُنھیں پینسلوانیہ کے چراگاہ لے جایا جائے گا

حیوانات کی بہبود کی مہم سے وابستہ سرگرم کارکنوں نے مطالبہ کیا ہے کہ نیویارک میں بگھی کی سواری کو بند کیا جائے۔ اور بِل ڈی بلاسیو کے میئر منتخب ہونے سے، اس مہم کو اب ایک طاقت ور ساتھی میسر آگیا ہے۔

عہدے کا حلف لینے سے قبل ہی بلاسیو نے کہا تھا کہ بگھی کے نام پر گھوڑوں پر مظالم کے خاتمے کو اولیت دینے کے خواہاں ہیں۔

نیو یارک میں بگھی کی سواری سینٹرل پارک اور پھر کچھ گھنٹوں کے لیے سینٹرل مین ہٹن کی کچھ سڑکوں پر چلتی ہے۔

ڈی بلاسیو نے گذشتہ دسمبر میں ایک مجمعے سے خطاب میں کہا تھا کہ، یہ انسانیت سوز فعل ہے، جو سال 2014ء میں مناسب نہیں۔ اسے اب ختم ہوجانا چاہیئے۔
اس جذبے کے حامیوں میں باقی کے علاوہ، ’ہیومین سوسائٹی‘ اور حیوانوں کے خلاف ظلم سے بچاؤ کی امریکی تنظیم شامل ہے، جو بگھیوں میں بندھے گھوڑوں کے ساتھ اختیار کیے گئے رویے پر چوکسی رکھتی ہے۔

تاہم، رائے عامہ کے جائزے بتاتے ہیں کہ نیویارک کے زیادہ تر باشندے گھوڑوں کی اس سواری کے حق میں ہیں۔

ڈرائیور کرسٹینا ہینسن کے بقول، یہی تو نیو یارک سٹی کی روایتی خوبصورتی کا ایک جزو ہے۔

بقول اُن کے، وہ لوگ بھی جو گھوڑوں کی اس سواری پر نہیں بیٹھتے، وہ سینٹرل پارک ویسٹ کے قریب گھوڑوں کے اس منظر کو دیکھنے کے موقعے کو غنیمت جانتے ہیں۔ وہ اس بات سے محظوظ ہوتے ہیں کہ کام کے سلسلے میں گھوڑوں کی انسانوں کے ساتھ کس طرح کی ایک ساجھے داری ہے۔

اس صنعت میں اب 200 گھوڑے اور تقریباً 300 افراد باقی رہ گئے ہیں، جو حیوانوں کے بھبود سے متعلق بے شمار ضابطوں کے تحت کام کر رہی ہے۔ یہ طے ہے کہ گھوڑوں سے دی گئی اجازت سے زیادہ گھنٹوں تک کام نہیں لیا جاسکتا، وہ سخت گرم یا شدید سرد موسم میں کام نہیں کریں گے، اور مقررہ اوقات پر اُن کا حیوانوں کے معالجوںٕ سے باضابطہ چیک اپ کرایا جائے گا۔ باقی شرائط کے علاوہ، ایک گھوڑے کو سال میں پانچ ہفتوں کی ’تعطیل‘ ہوگی، اور یہ لازم ہے کہ اُنھیں پینسلوانیہ کے چراگاہ لے جایا جائے گا۔
بگھی چلانے والے، کونور مک ہوگ اِس شہر میں ایک اصطبل کے انتظام کی دیکھ بھال کرتے ہیں۔ اُنھوں نے کہا کہ گھوڑا رکھنے کےلازمی شرائط یہ ہیں کہ گھوڑے کے لیے کشادہ جگہ ہو، اچھی غذا میسر ہو، اور دوسرے گھوڑوں سے ملنے کی مواقع میسر ہوں۔

ایلی فیلڈمن نیو یارک میں ’صاف، قابل رہائش اور محفوظ سڑکوں کی انجمن‘ کی منتظم اعلیٰ ہیں۔ یہ گروپ بگھی کی سواری کے خلاف کام کرتا ہے۔

وہ کہتی ہیں کہ دیکھنے میں یہ آیا ہے کہ سڑکوں پر شور اور ہنگامہ آرائی کا ماحول گھوڑوں کی طبیعت کو موافق نہیں آتا۔

دیگر مخالفین کی طرح، فیلڈمن کا کہنا ہے کہ گھوڑوں کی سواری کو پیش آنے والے حادثات اس بات کی ضرورت کی نشاندہی کرتے ہیں کہ اس دھندے کو اب بند ہوجانا چاہیئے۔ مزید یہ کہ گھوڑوں کے ساتھ روا رکھا جانے والا سلوک مناسب نہیں اور مالک اُن کی ضروری نگہداشت نہیں کر پاتے۔

اُن کا گروپ پولیس کے زیر استعمال گھوڑوں کے بھی خلاف ہے۔

حالیہ ہفتوں کے دوران، میئر ڈی بلاسیو کے رویے میں کچھ تبدیلی آئی ہے۔ اب وہ کہتے ہیں کہ بگھی پر پابندی لگانے کا معاملہ فوری ترجیحات میں شامل نہیں۔

ادھر، ’نیو یارک ڈیلی نیوز‘ کی رپورٹوں کے مطابق، ڈی بلاسیو کی انتخابی مہم کے دوران، گھوڑوں پر مظالم کے خلاف تنظیم نے اُنھیں 50000ڈالر کا چندہ دیا تھا؛ جب کہ میئر کی الیکشن میں بگھی کی سواری پر پابندی لگانے کی مخالف امیدوار، کرسٹین کوئین کو ہرانے کے لیے 11لاکھ ڈالر خرچ کیے۔
XS
SM
MD
LG