رسائی کے لنکس

پولیس نے لڑکے کے خلاف مقدمہ درج کر لیا لیکن دوران تفتیش لڑکے نے اس تعلق کے لیے لڑکی کی طرف سے دباؤ ڈالے جانے کا دعویٰ کیا جس پر لڑکی کے خلاف بھی مقدمہ درج کر لیا گیا۔

بھارت میں ایک 12 سالہ لڑکا اپنی رشتے دار لڑکی کے ساتھ "جنسی تعلق" کے باعث ایک بچے کا باپ بن گیا ہے۔

مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق ریاست کیرالا کے علاقے کوچی میں آٹھویں جماعت کے طالب علم لڑکے پر اس کی 16 سالہ رشتے دار لڑکی نے الزام عائد کیا کہ اس نے اسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

پولیس نے لڑکے کے خلاف مقدمہ درج کر لیا لیکن دوران تفتیش لڑکے نے اس تعلق کے لیے لڑکی کی طرف سے دباؤ ڈالے جانے کا دعویٰ کیا جس پر لڑکی کے خلاف بھی مقدمہ درج کر لیا گیا۔

لڑکی کے والدین نے نومولود کی دیکھ بھال کرنے سے انکار کر دیا جس کے بعد یہ بچہ بچوں کی فلاح و بہبود کی کمیٹی کے سپرد کر دیا گیا ہے۔

کم سن باپ کو بھی کوچی سے کسی دوسرے شہر منتقل کر دیا گیا ہے۔

ریاست کے ایک بڑے میڈیکل کالج اسپتال کے پروفیسر ڈاکٹر پی کے جبار نے بھارتی اخبار "دی ہندو" کو بتایا کہ "یہ کوئی غیر معمولی بات نہیں کہ لڑکا اپنی عمر سے پہلے ہی بلوغت کو پہنچ جائے۔"

لیکن کے بقول ان کے علم میں ایسا کوئی واقعہ نہیں ہے کہ ایک 12 سالہ لڑکا باپ بھی بنا ہو۔

بھارت میں جرائم کی شماریات کے بیورو کے مطابق گزشتہ سال جولائی تک کیرالا میں 1570 جرائم کے مقدمات رجسٹر ہوئے تھے جن میں 520 جنسی زیادتی کے تھے۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG