رسائی کے لنکس

بھارت: سونیا گاندھی کی مظاہرین سے ملاقات


(فائل فوٹو)

(فائل فوٹو)

اتوار کو پولیس کا کہنا تھا کہ دارالحکومت میں صدراتی رہائش گاہ اور پارلیمان کی عمارت والے علاقے کو مظاہرین کے لیے ممنوعہ قرار دے دیا گیا ہے۔

بھارت میں حکمران جماعت کانگریس کی سربراہ سونیا گاندھی نے اتوار کو نئی دہلی میں اپنے گھر کے باہر جمع طالبہ سے جنسی زیادتی کے خلاف مظاہرہ کرنے والوں سے ملاقات کی۔

یہ مظاہرین جنسی زیادتی کے ملزمان کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کر رہے تھے۔ پولیس تمام چھ مشتبہ افراد کو گرفتار کر چکی ہے۔

اتوار کو پولیس کا کہنا تھا کہ دارالحکومت میں صدارتی رہائش گاہ اور پارلیمان کی عمارت والے علاقے کو مظاہرین کے لیے ممنوعہ قرار دے دیا گیا ہے۔ مزید مظاہروں کے پیش نظر شہر کے متعدد میٹرو اسٹیشنز کو اتوار کے روز بند کر دیا گیا۔

ہفتہ کو بھی ہزاروں افراد نے نئی دہلی میں مظاہرہ کیا جس میں وہ ’’ہمیں انصاف چاہیئے‘‘ کے نعرے بلند کرتے رہے۔ پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گیس کا بھی استعمال کیا۔

گزشتہ اتوار کی رات نئی دہلی میں ایک چارٹرڈ بس میں سوار کچھ افراد نے میڈیکل کالج کی ایک 23 سالہ طالبہ اور اس کے مرد ساتھی کو بس میں لفٹ دی۔

عہدے داروں کا کہنا ہے کہ انہوں نے لوہے کی سلاخ سے دونوں کو مارا پیٹا اور لڑکی کو اجتماعی جنسی زیادتی کے بعد تقریباً برہنہ حالت میں چلتی بس سے نیچے پھینک دیا۔

متاثرہ لڑکی تاحال اسپتال میں زیر علاج ہے اور ہفتہ کو اس نے پولیس کو اپنا بیان بھی ریکارڈ کرایا۔

رواں سال اب تک نئی دہلی میں چھ سو سے زائد جنسی زیادتی کے کیس رپورٹ ہو چکے ہیں جو کہ ملک میں ایسے واقعات کی سب سے زیادہ تعداد ہے۔
XS
SM
MD
LG