رسائی کے لنکس

نجم سیٹھی نے ’آئی سی سی‘ کا صدر بننے سے معذرت کر لی


نجم سیٹھی

نجم سیٹھی

نجم سیٹھی پاکستان کرکٹ بورڈ کی ایگزیکٹیو کمیٹی کے سربراہ ہیں اور انہیں آئی سی سی کی صدارت کے رسمی عہدے کے لیے پاکستان کی طرف سے نامزد کیا گیا تھا۔

پاکستان کے ایک معروف صحافی نجم سیٹھی نے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) سنھبالنے سے معذرت کرتے ہوئے اپنے فیصلے سے پاکستان کرکٹ بورڈ اور ’آئی سی سی‘ دونوں کو آگاہ کر دیا ہے۔

اُنھیں رواں سال یکم جولائی کو یہ منصب سنبھالنا تھا۔

واضح رہے کہ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے اپنے موجودہ بورڈ کے آخری اجلاس میں رکن ممالک کو تجویز دی تھی کہ وہ کونسل کے صدر کے عہدے کے لیے کسی سابق ٹیسٹ کرکٹر کو نامزد کریں۔

بظاہر اس تجویز کے بعد پاکستان کی طرف سے پہلے سے نامزد صحافی نجم سیٹھی نے اپنی نامزدگی واپس لے لی۔

نجم سیٹھی پاکستان کرکٹ بورڈ کی ایگزیکٹیو کمیٹی کے سربراہ ہیں اور انہیں ’آئی سی سی‘ کی صدارت کے رسمی عہدے کے لیے پاکستان کی طرف سے نامزد کیا گیا تھا۔

نجم سیٹھی کو یکم جولائی سے 12 ماہ کے لیے آئی سی سی کی صدارت کا عہدہ سنبھالنا تھا۔

تاہم صدارت کی میعاد شروع ہونے سے ایک ماہ قبل انہوں نے اپنی نامزدگی واپس لے لی۔

اپنے ٹوئٹر بیان میں انہوں نے کہا کہ ’’میں نے آئی سی سی کے عہدہ صدارت سے دستبردار ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ میں پی سی بی کو درخواست کروں گا کہ وہ اس کھیل کی روح کے مطابق ایک عظیم سابق ٹیسٹ کرکٹر کو اس عہدے کے لیے نامزد کرے۔‘‘

ایک اور ٹویٹ میں انہوں نے کہا کہ ’’بین الاقوامی کرکٹ کی وطن آمد میں کامیابی اور اس کی بحالی کی روح کے مطابق اب وقت آ گیا ہے کہ پاکستان کے ایک عظیم کھلاڑی کو ’آئی سی سی‘ کا اگلا صدر بنا کر ان کو خراج تحسین پیش کیا جائے۔‘‘

اس سے قبل بنگلہ دیش کے مصطفیٰ کمال ’آئی سی سی‘ کے صدر تھے جنہوں نے ورلڈ کپ میں بنگلہ دیش اور بھارت کے کواٹر فائنل میچ کے امپائروں پر تنقید کے بعد اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔

اس میچ میں بھارت نے بنگلہ دیش کو 109 رنز سے شکست دی تھی۔ انہوں نے اس بات پر بھی اعتراض کیا تھا کہ آئی سی سی کے صدر کی حیثیت سے ورلڈ کپ جیتنے والی ٹیم کو ٹرافی دینے کے لیے انہیں کیوں نہیں بلایا گیا، جو صدر کی حیثیت سے ان کا حق تھا۔

XS
SM
MD
LG