رسائی کے لنکس

جوہری سمجھوتہ، ایران کوئی چیز ’منہدم‘ نہیں کر رہا: ظریف


ایرانی وزیر خارجہ نے بدھ کے روز ’سی این این‘ ٹیلی ویژن کو بتایا کہ سمجھوتے کے بارے میں وائٹ ہاؤس کا بیان، بقول اُن کے، ’ایرانی عزم کو بڑھا چڑھا کر‘ پیش کر رہا ہے

ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے کہا ہے کہ حالیہ دِنوں کے دوران، امریکہ اور پانچ دیگر ممالک کے ساتھ ہونے والے جوہری سمجھوتے میں، ایران نے کسی چیز کو ’منہدم‘ کرنے سے اتفاق نہیں کیا۔

ظریف نے بدھ کے روز ’سی این این‘ ٹیلی ویژن کو بتایا کہ سمجھوتے کے بارے میں وائٹ ہاؤس کا بیان، بقول اُن کے، ’ایرانی عزم کو بڑھا چڑھا کر‘ پیش کرتا ہے۔

ظریف نے کہا کہ ایران کسی سینٹرفیوجز یا آلات کو منہدم نہیں کر رہا۔

اُنھوں نے کہا کہ جو کام ایران کر رہا ہے وہ یہ ہے کہ وہ یورینئیم کی پانچ فی صد کی شرح سے زائد افزودگی نہیں کر رہا۔ افزودگی کی اِس سے اونچی سطح، جوہری ہتھیار بنانے کے لیے استعمال ہو سکتی ہے۔

ظریف نے کہا کہ وائٹ ہاؤس اس سمجھوتے کو ایران کے جوہری پروگرام کو منہدم کیے جانے کے طور پر پیش کر رہا ہے۔ اُنھوں نے چیلنج کیا کہ سمجھوتے کے متن میں کوئی شخص ’منہدم کرنے‘ کا لفظ تلاش کرکے بتائے۔

امریکی اہل کاروں نے ابھی ظریف کے اِس انٹرویو پر اپنا ردِ عمل ظاہر نہیں کیا۔
XS
SM
MD
LG