رسائی کے لنکس

القاعدہ سے منسلک تنظیم نے بغدا د میں حملے کی ذمہ داری قبول کرلی

  • ب

القاعدہ سے تعلق رکھنے والی ایک تنظیم نے دعویٰ کیا ہے کہ عراق میں رواں ہفتے ہونے والا طاقتور خودکش بم دھماکا اُس کے جنگجوؤں کی کارروائی تھی۔ اس حملے میں لگ بھگ 60 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

انٹرنیٹ پر انتہا پسندوں کی مختلف ویب سائیٹس کے مطابق” ریاستِ اسلامی عراق“ نامی تنظیم نے کہا ہے کہ منگل کو کیے گئے اس دھماکے میں مبینہ طور پر جن ”مرتدوں“ کو نشانہ بنایا گیا وہ اپنا مذہب بیچ کرسنی عراقیوں کے خلاف لڑائی میں ہتھیار بن گئے تھے۔

یہ خودکش دھماکا عراق میں فوجی بھرتیوں کے ایک مرکز کے باہر کیا گیا تھا جس میں 125 سے زائد افراد زخمی بھی ہوئے۔ ماہ رمضان شروع ہونے کے بعد ملک میں ہونے والے یہ سب سے ہلاکت خیز حملہ تھا۔

عراقی پولیس کا ماننا ہے کہ ریاستِ اسلامی عراق تنظیم ملک میں حالیہ دنوں میں ہونے والے کئی دوسرے حملوں میں بھی ملوث رہی ہے جن میں منگل کو بغداد میں ایک فوجی چیک پوسٹ پر حملہ بھی شامل ہے۔ اس واقعے میں پانچ پولیس افسران ہلاک ہو گئے تھے۔

XS
SM
MD
LG