رسائی کے لنکس

عراق: متنازع انتخابات میں بین الاقوامی مداخلت کا مطالبہ


عراق میں پچھلے مہینے کے پارلیمانی انتخابات میں بہت معمولی فرق سے کامیاب ہونے والے سیاسی پارٹیوں کے اتحاد نے کہا ہے کہ وہ اپنے حریفوں کو الیکشن کے نتائج کو بدلنے کی کوششوں سے باز رکھنے کے لیے ہوسکتا کہ بین الاقوامی مداخلت کی درخواست کرے۔

سابق وزیِر اعظم ایاد علاوی کے زیرِ قیادت اتحاد، عراقیہ نے بدھ کے روز کہا ہے کہ وہ بین الاقوامی تنظیموں سے عراق میں کوئى نگراں حکومت تشکیل دینے کی درخواست پر غور کر رہا ہے۔ان تنظیموں میں اقوامِ متحدہ کی سلامتی کونسل، یورپی یونین، اسلامی کانفرنس کی تنظیم اور عرب لیگ شامل ہیں۔

عراقیہ کا کہنا ہے کہ یہ ادارے ایک ایسے ماحول میں جو ”سیاسی جوڑ توڑ“ سے پاک ہو، نئے پارلیمانی انتخابات کرانے میں عراق کی مدد کرسکتے ہیں۔

غیر سرکاری انتخابی نتائج کے مطابق، عراقیہ نے عراقی پارلیمنٹ کی 91 نشستیں حاصل کی ہیں ، جو اُس کے قریب ترین حریف وزیرِ اعظم نوری المالکی کے اتحاد کی نشستوں سے بقدر دو زیادہ ہیں۔

لیکن عراقیہ کی اس سبقت کو اُس عراقی عدالت سے خطرہ لاحق ہے ، جس نے عراقیہ کے ایک کامیاب اُمیدوار کو نا اہل قرار دے دیا ہے اور وہ مزید اُمید واروں کو نااہل قرار دینے پر غور کررہی ہے۔

XS
SM
MD
LG