رسائی کے لنکس

سکھر: 'آئی ایس آئی' کے دفتر پر حملہ، چھ افراد ہلاک


ڈی آئی جی جاوید اووڈھو کا کہنا ہے کہ دھماکے بیراج کالونی کے کمپاوٴنڈ میں ہوئے جن کا بظاہر نشانہ فوج کی خفیہ ایجنسی 'آئی ایس آئی' کا دفتر تھا۔

سندھ کے شہر سکھر کی بیراج کالونی میں بدھ کی شام ایک حساس ادارے کے دفتر خودکش حملوں اور فائرنگ کے نتیجے میں پانچ حملہ آوروں سمیت چھ افراد ہلاک اور 30 سے زائد زخمی ہوگئے۔
ڈی آئی جی سکھر جاوید اووڈھو کے مطابق دھماکے بیراج کالونی کے کمپاوٴنڈ میں ہوئے جن کا بظاہر نشانہ فوج کی خفیہ ایجنسی 'آئی ایس آئی' کا دفتر تھا۔

مذکورہ کمپاوٴنڈ میں 'آئی ایس آئی' کے دفتر کے علاوہ ڈی آئی جی اور کمشنر سکھر کی رہائش گاہیں اور ججز ہاوٴس قائم ہیں۔

سندھ رینجرز کے ترجمان کے مطابق پانچ دہشت گردوں نے بدھ کی شام افطار کے کچھ دیر بعد بیراج کالونی میں قائم 'آئی ایس آئی' کے دفتر پر حملہ کیا۔

حملہ آوروں میں سے دو نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا جب کہ تین دہشت گردسیکورٹی فورسز کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے میں ہلاک ہوگئے۔

واقعے میں سیکورٹی فورسز کے کچھ اہلکار بھی زخمی ہوئے ہیں۔ ترجمان کا کہنا ہے کہ حملے کی جگہ کلیئر کرالی گئی ہے۔ حکام کے مطابق دھماکوں کے بعد ضلعے اور ریجن کی ناکہ بندی کردی گئی ہے۔

ڈی آئی جی سکھر جاوید اوڈھو نے بتایا ہے کہ مرنے والوں میں کمشنر ہاوٴس کا ایک ملازم بھی شامل ہے۔
واقعے کے فوری بعد پولیس اوررینجرز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔ دھماکے کے بعد علاقے میں خوف وہراس پھیل گیا۔ جس جگہ دھماکا ہوا وہاں 'آئی ایس آئی' کے افسران کی رہائش گاہیں بھی واقع ہیں۔
XS
SM
MD
LG