رسائی کے لنکس

حالیہ مہینوں میں امریکہ کی طرف سے افغانستان کے ساتھ اعلیٰ سطحی رابطوں میں اضافہ دیکھا گیا ہے۔

امریکہ کے وزیر خارجہ جان کیری ہفتہ کو غیر اعلانیہ دورے پر افغانستان پہنچے جہاں افغان قیادت سے ملاقاتیں کر رہے ہیں۔

ان کے دورے کا بظاہر مقصد افغانستان کی قومی اتحادی حکومت کے لیے امریکہ کی حمایت کا اعادہ کرنا تھا۔

2014ء کے صدارتی انتخابات میں اشرف غنی کی کامیابی کو عبداللہ عبداللہ نے تسلیم کرنے سے انکار کر دیا تھا اور ملک میں ایک سیاسی بحران کی سی صورتحال پیدا ہو چلی تھی۔

اس وقت بھی جان کیری نے ہی غنی اور عبداللہ کے مابین شراکت اقتدار کے ایک معاہدے کو قابل عمل بنانے میں اہم کردار ادا کیا تھا۔

اس معاہدے کے تحت دو سالوں میں سیاسی اصلاحات کے ذریعے چیف ایگزیکٹو کے عہدے کو وزارت عظمیٰ میں تبدیل کیا جانا بھی شامل تھا لیکن ڈیڑھ سال پرانی اتحادی حکومت تاحال اس ضمن میں کوئی قابل ذکر پیش رفت نہیں دکھا سکی۔

اسی دوران کئی اہم عہدوں پر تعیناتیوں کے معاملے پر بھی اتحادی حکومت میں شدید اختلافات دیکھنے میں آچکے ہیں جب کہ گزشتہ ماہ رائے عامہ کے ایک جائزے سے معلوم ہوا کہ 80 فیصد افغان اس اتحادی حکومت کی کارکردگی سے کلی یا جزوی طور پر مطمیئن نہیں ہیں۔

گزشتہ سال ہی افغان طالبان کے ساتھ شروع ہونے والا مصالحتی عمل بھی تاحال تعطل کا شکار ہے اور ایسے میں طالبان حکومت کے خلاف تشدد پر مبنی اپنی تازہ مہم کا عندیہ بھی دے چکے ہیں۔

افغان امور کے ماہر اور سینیئر تجزیہ کار رحیم اللہ یوسفزئی نے وائس آف امریکہ سے گفتگو میں کہا کہ جنگ سے تباہ حال ملک افغانستان میں خطرات بڑھتے جا رہے ہیں اور اتحادی حکومت میں عدم اتفاق نقصان دہ ثابت ہوگا۔

"خطرات بڑھتے جا رہے ہیں افغان حکومت کے لیے، افغان حکومت میں جو اختلاف رائے ہے اس کی وجہ سے وہ اس خطرے کا صحیح طریقے سے مقابلہ نہیں کر سکتے اور یہی امریکہ کی بھی ایک فکر ہے کہ ان کے اختلافات کو دور کرنا پڑے گا ورنہ حالات خراب بھی ہو سکتے ہیں۔"

امریکہ کی زیر قیادت اتحادی افواج 2014ء کے اواخر میں اپنا لڑاکا مشن ختم کر کے اپنے وطن واپس جا چکی ہیں لیکن ایک معاہدے کے تحت اب بھی تقریباً 12 ہزار بین الاقوامی فوجی یہاں مقامی سکیورٹی فورسز کی تربیت اور انسداد دہشت گردی میں معاونت کے لیے موجود ہیں۔ ان فوجیوں میں اکثریت امریکیوں کی ہے۔

حالیہ مہینوں میں امریکہ کی طرف سے افغانستان کے ساتھ اعلیٰ سطحی رابطوں میں اضافہ دیکھا گیا ہے۔

گزشتہ ماہ صدر براک اوباما نے وڈیو کانفرنس کے ذریعے افغان صدر اشرف غنی اور چیف ایگزیکٹو عبداللہ عبداللہ سے بات کی تھی۔

XS
SM
MD
LG