رسائی کے لنکس

شکاگو پولیس کی شہری حقوق کی خلاف ورزیاں، محکمہٴ انصاف کی سخت رپورٹ


فائل

محکمہٴ انصاف کے حکام نے سال بھر کی تفتیش کے بعد جمعے کو یہ رپورٹ جاری کی۔ اس میں یہ بات کہی گئی ہے کہ شکاگو محکمہٴ پولیس کے ادارے کے مسائل نے شہری حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کا روپ اختیار کر لیا ہے، جِن میں نسلی امتیاز اور شدید فورس کے استعمال کے رجحان کا معاملہ شامل ہے

امریکی محکمہٴ انصاف نے برسہا برس سے شکاگو محکمہٴ پولیس کی جانب سے روا رکھی جانے والی شہری حقوق کی خلاف ورزیوں کے بارے میں ایک سنگین نوعیت کی رپورٹ جاری کی ہے۔

محکمہٴ انصاف کے حکام نے سال بھر کی تفتیش کے بعد جمعے کو یہ رپورٹ جاری کی۔ اس میں یہ بات کہی گئی ہے کہ شکاگو محکمہٴ پولیس کے ادارے کے مسائل نے شہری حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کا روپ اختیار کر لیا ہے، جِن میں نسلی امتیاز اور شدید فورس کے استعمال کے رجحان کا معاملہ شامل ہے۔

اِس تفتیش کا آغاز سنہ 2015ء میں کیا گیا تھا، جب ’ڈیش کیم وڈیو‘ نمودار ہوئی تھی، جس میں ایک پولیس اہل کار ایک سیاہ فام نوجوان، لوکان مک ڈونالڈ کو 16 گولیاں مار کر چھلنی کر دیتا ہے۔

یہ رپورٹ ایک طویل مدتی عمل کا شاخسانہ ہے، جو حالیہ برسوں کے دوران، بظاہر محکمہٴ انصاف اور ایک شہر کے مابین بحث کا سبب بنا، جس کے نتیجے میں ایک جج نے تصفیے پر مبنی ایک منصوبہ تیار کرکے اس پر عمل درآمد کروایا۔
اِس کیس سے یہ ضرورت اُبھرتی ہے آیا منتخب صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی انتظامیہ پولیس اصلاحات کے معاملے پر کس طرح پیش رفت کی تگ و دو کرے گی۔

XS
SM
MD
LG