رسائی کے لنکس

ملیکہ شیراوت: ’انڈیا کی کنواری، میرے خیالوں کی ملکہ‘

  • کراچی

عنوان دیکھ کر آپ چونک گئے ناں۔۔۔!!۔ دراصل، یہ ملیکہ کے نئے ٹی وی شو کا نام ہے جس میں کام کرنے کا معاوضہ ہے۔۔ 30کروڑ روپے۔۔ ہے ناں، انتہائی پرکشش معاوضہ؟

بالی ووڈ اسٹارز جب بھی بڑی اسکرین سے چھوٹی اسکرین کا رخ کرتے ہیں، ان کا معاوضہ بہت بھاری بھرکم ہوتا ہے۔ دراصل ایسے فنکاروں کی فہرست بہت لمبی چوڑی ہے، اسے ’ٹی وی اسٹار لیگ‘ بھی کہا جاتا ہے۔ اس لیگ میں اب ایک اور نام شامل ہوگیا ہے اور وہ نام ہے ملیکہ شیراوت کا۔

ملیکہ شیراوت کے کریڈٹ پر کوئی ہٹ فلم ہو نہ ہو لیکن بلاشبہ وہ اب بھی آئٹم سونگز کی ملکہ ہیں اور یہی وجہ ہے کہ فلم ہٹ ہو یا فلاپ، ملیکہ کی ڈیمانڈ میں کمی نہیں آتی۔

اخبار’ہندوستان ٹائمز‘ نے خبر دی ہے کہ ملیکہ شیراوت جلد ہی ایک رئیلٹی شو ’انڈیا کی کنواری۔۔۔میرے خیالوں کی ملکہ‘ کی میزبانی کرتی نظر آئیں گی۔اس شو کی 30قسطیں ہیں جن میں کام کرنے کے لئے دیئے جائیں گے 30کروڑ روپے ۔۔۔یعنی ایک ایپی سوڈ کے ایک کروڑ۔۔ہے ناں انتہائی پرکشش معاوضہ؟

شو کا مجموعی بجٹ 50کروڑروپے کا ہے جس میں مارکیٹنگ کے اخراجات شامل نہیں اور اسی لئے اس شو کومہنگے ترین شوز میں شمار کیا جا رہاہے۔

’میرے خیالوں کی ملکہ‘ کو آن ائیر کرنے والے چینل کے جنرل منیجراجیت ٹھاکر نے ملیکہ شیراوت سے ہونے والی ڈیل کی تفصیلات بتانے سے انکار کیا لیکن ان کا کہنا ہے، ’ملیکہ ایک مہنگی اسٹار ہیں جو لاس اینجلس میں رہتی ہیں۔ انہیں معاوضہ ڈالرز میں دیا جاتاہے۔ ہم ایسی ہی کسی سیلیبرٹی کو اپنے شو کے لئے چاہتے تھے۔رہی ملکہ کی فیس کی بات۔۔۔تو اس پر کوئی بات نہیں کی جاسکتی۔‘

ملیکہ شیراوت ایسی اداکارہ ہیں جنھوں نے کبھی بھی ہیڈلائنز کا حصہ بننے کے لئے کوشش نہیں کی لیکن اس کے باوجود ماضی میں ان کے حوالے سے کوئی نہ کوئی اسکینڈل سامنے آتا رہا ہے۔

ان کا نیا شو اب تک تو کسی قسم کی ہائپ کری ایٹ نہیں کرسکا ہے، جس کی وجہ بتاتے ہوئے شو سے وابستہ لوگوں کا کہنا ہے کہ شو کی جان بوجھ کر زیادہ پبلسٹی نہیں کی گئی ہے۔ گذشتہ کچھ ہفتوں میں ’مہا بھارت‘، ’بگ باس‘ اور’کون بنے گا کروڑ پتی‘ جیسے بڑے شوز کی پروموشن جاری تھی۔ جب ان شوز کے حوالے سے جوش وخروش کچھ ٹھنڈا ہوجائے گا، تو وہی ’میرے خیالوں کی ملکہ‘ کی پروموشن کا صحیح وقت ہوگا۔
XS
SM
MD
LG