رسائی کے لنکس

کشتی میں 200 سے زائد مسافر سوار تھے۔ یہ واقع اُس وقت پیش آیا جب جمعے کی رات گئے، رکھائین کی مغربی ریاست میں کیاکپی کے قصبے اور ستوے کے درمیان، گہرے سمندر سے اٹھنے والی لہریں ’آنگ تکون‘ سے ٹکرائیں، جس کے باعث کشتی غرقاب ہوگئی

مغربی میانمار کے ساحل کے قریب کشتی ڈوبنے کے ایک واقع میں کم از کم 33 افراد ہلاک، جب کہ درجنوں لاپتا ہوگئے ہیں۔

اس کشتتی کو، جس میں 200 سے زائد مسافر سوار تھے، یہ واقع اُس وقت پیش آیا جب جمعے کی رات گئے، رکھائین کی مغربی ریاست میں کیاکپی کے قصبے اور ستوے کے درمیان، گہرے سمندر سے اٹھنے والی لہریں ’آنگ تکون‘ سے ٹکرائیں، جس کے باعث کشتی غرقاب ہوگئی۔

حکام کا کہنا ہے کہ 167 افراد کو بچا لیا گیا ہے۔ لیکن، خیال کیا جاتا ہے کہ باقی تمام مسافر ڈوب گئے ہیں۔

تاہم، مقامی مکینوں کا کہنا ہے کہ اس سے کہیں زیادہ لوگ ہلاک ہوئے ہیں۔

بقول اُن کے، اس شمار میں بہت سے افراد شامل نہیں، کیونکہ کشتی میں گنجائش سے زائد مسافر سوار تھے۔

جنوب مشرقی ایشیا میں بحری حادثے عام سی بات ہے، جہاں نقل و حمل کے لیے سواریاں خستہ کشتیوں میں اور گنجائش سے زائد بٹھائی جاتی ہیں۔

XS
SM
MD
LG