رسائی کے لنکس

نومبر کے آخر تک قندھارسے طالبان کاصفایا کردیا جائے گا: نیٹو


نیٹو کے ایک اعلیٰ کمانڈر نے کہا ہے کہ افغان اور بین الاقوامی افواج نومبر کے آخر تک افغانستان کے جنوبی شہر قندھار میں طالبان باغیوں کا صفایا کردیں گی۔

برطانوی میجر جنرل نِک کارٹر نے وِڈیو فون کانفرنس پرنامہ نگاروں کو بتایا کہ اگلےدو سےتین ماہ تک 10000افغان فوجی اور 5000افغان پولیس جنِہیں 15000اتحادی افواج کی مدد حاصل ہوگی، قندھار اور اُس کے قرب و جوار میں تقریباً 1000شدت پسندوں کو ہدف بنائیں گے.

جنرل کارٹر نے کہا کہ یہ کارروائی ہائی وے نمبر ایک سے ملنے والے اضلاع پر مرتکز رہے گی، جو ایک کلیدی سڑک ہے جہاں طالبان کسی حد تک آزادی سے کارروائیاں کر رہے ہیں۔

صوبہٴ قندھار وہ علاقہ ہے جہاں طالبان نےجنم لیا۔

برطانوی کمانڈر نے منگل کو بتایا کہ کارروائی کی کامیابی کا دارومدار افغان حکومت کی طویل مدتی سلامتی اور عملداری کی صلاحیتوں پر ہے۔

جنرل کارٹر نے کہا کہ نیٹو افواج اگلے چھ سے نو ماہ کے اندر قندھار شہر میں بجلی کی رسد کو دوگنا کرنے پر غور کر رہے ہیں، جہاں حالیہ مہینوں میں سینکڑوں کاروباروں کو بند کیا جا چکا ہے۔

XS
SM
MD
LG