رسائی کے لنکس

بلوچستان: اکبر بگٹی کی ساتویں برسی پر ہڑتال


فائل فوٹو

فائل فوٹو

نواب اکبر بگٹی 26 اگست 2006 کو بلوچستان کے ضلع کوہلو کے پہاڑی علاقے میں فوجی کارروائی کے دوران ہلاک ہو گئے تھے۔

بلوچستان کے قوم پرست رہنما نواب اکبر بگٹی کی ساتویں برسی کے موقع پر پیر کو صوبے کے بیشتر علاقوں میں شٹر ڈاؤن ہڑتال کی جا رہی ہے۔

اس ہڑتال کی کال بلوچستان کی جمہوری وطن پارٹی اور بلوچ ریپبلکن پارٹی نے دی تھی۔

کسی بھی ناخوشگوار واقعہ سے بچنے کے لیے صوبائی دارالحکومت کوئٹہ اور صوبے کے دیگر اضلاع میں سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔

نواب اکبر بگٹی 26 اگست 2006 کو بلوچستان کے ضلع کوہلو کے پہاڑی علاقے میں فوجی کارروائی کے دوران ہلاک ہو گئے تھے۔ اُس وقت فوج کے سربراہ اور صدر پرویز مشرف کے خلاف اکبر بگٹی کے قتل کا مقدمہ ان دنوں کوئٹہ کی انسدادِ دہشت گردی کی عدالت میں زیر سماعت ہے۔

اس مقدمے میں سابق وزیر اعظم شوکت عزیز، بلوچستان کے سابق گورنر اویس غنی، مرحوم سابق وزیر اعلٰی جام یوسف، پرویز مشرف دور کے وزیر داخلہ آفتاب شیرپاؤ اور بلوچستان کے سابق وزیر داخلہ شعیب نوشیروانی اور اکبر بگٹی کے آبائی ضلع ڈیرہ بگٹی کے اُس کے وقت کے ڈپٹی کمشنر عبدالصمد لاسی بھی نامزد ملزمان میں شامل ہیں۔

نواب اکبر بگٹی کے قتل کے بعد بلوچستان میں حالات مزید کشیدہ ہو گئے اور تشدد کے واقعات میں سینکڑوں لوگ اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔

صوبے میں بدامنی کا سپریم کورٹ نے نوٹس بھی لے رکھا ہے اور چیف جسٹس کی سربراہی میں پیر کو بھی اس مقدمے کی سماعت ہوئی۔
XS
SM
MD
LG