رسائی کے لنکس

نیشنل بینک کے صدر کو عہدہ چھوڑنے کاحکم


نیشنل بینک کے صدر کو عہدہ چھوڑنے کاحکم

نیشنل بینک کے صدر کو عہدہ چھوڑنے کاحکم

چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کی سربراہی میں عدالت عظمیٰ کے تین رکنی بنچ نے ملک کے سرکاری بینک’ نیشنل بینک ‘کے صدر علی رضا کی مدت ملازمت میں توسیع کو غیر آئینی قرار دیتے ہوئے اُنھیں حکم دیا ہے کہ وہ اپنا عہدہ چھوڑ دیں۔

علی رضا (فائل فوٹو)

علی رضا (فائل فوٹو)

علی رضا کی بطور نیشنل بینک کے صدر کے تقرری کے خلاف دائر درخواستوں کی سماعت کے دوران عدالت نے کہا کہ علی رضا کی مدتِ ملازمت میں توسیع کے لیے جو نوٹیفکیشن جاری کیا گیا تھا وہ غیر آئینی ہے۔

اسٹیٹ بینک کے قواعد و ضوابط کے مطابق نیشنل بینک کے سربراہ کی مدت ملازمت میں دو مرتبہ توسیع کی جا سکتی ہے۔ لیکن علی رضا کی مدت ملازمت میں 10 اپریل 2010ء کو چوتھی مرتبہ توسیع کی گئی۔

اُن کی اس تقرری کے خلاف نیشنل بینک ہی کے کئی ملازمین نے سپریم کورٹ میں درخواستیں دائر کی تھیں۔

درخواستوں میں یہ موقف بھی اختیار کیا گیا کہ علی رضا نے نیشنل بینک کے صدر کی حیثیت سے بااثرافراد کے قرضے بھی معاف کیے ہیں اور اُن کی مدت ملازمت میں توسیع قواعدوضوابط سے ہٹ کر کی گئی ہے۔

XS
SM
MD
LG