رسائی کے لنکس

سیلاب زدگان کی امداد: اقوامِ متحدہ نے بڑھ چڑھ کر حصہ لیا ہے: ترجمان

  • بہجت گیلانی

سکریٹری جنرل بان کی مون

سکریٹری جنرل بان کی مون

امدادی کام کے دوران توجہ خوراک،سر چھپانے کی جگہ، صحت اور پانی و صفائی کے چارشعبوں پرمرکوز رہی

اقوامِ متحدہ کی ترجمان عشرت رضوی نے کہا ہے کہ عالمی ادارےنےواضح حکمتِ عملی کےتحت اپنی 16ایجنسیوں کے علاوہ انسانی بنیادوں پر کام کرنے والے تمام قومی اور بین الاقوامی اداروں کو ایک پلیٹ فارم پراکٹھا کیا، تاکہ پاکستان کے سیلاب زدگان کی فوری اورمؤثرامداد بجا لائی جاسکے۔

پیر کےروز ‘وائس آف امریکہ’ کودیے گئے انٹرویو میں ترجمان نے کہا کہ ادارے نے حکومتِ پاکستان اورمتاثرہ لوگوں کی فوری مدد کےلیے امداد کی باقاعدہ حکومتی درخواست آنے سےبھی قبل اپنا کام شروع کر دیا تھا، جو کہ‘ خوراک،سر چھپانے کی جگہ، صحت اور پانی و صفائی’کے چار شعبوں پرمرتکز تھا۔


عشرت رضوی نے کہا کہ امداد کا جو ابتدائی پلان دیا گیا تھا وہ 567ملین ڈالر کا تھا، جو شروعاتی تخمینے کی بنا پر تھا جِس میں 60لاکھ متاثرین کو مدِ نظر رکھا گیا تھا۔ بات کوواضح کرتے ہوئے، اُنھوں نے کہا کہ جب یہ ابتدائی تخمینہ لگایا گیا، اُس وقت تک خیبر پختون خواہ کےعلاوہ پنجاب کے کچھ علاقےمتاثر ہوئے تھے۔ اِس لیے اب ضرورت محسوس کی گئی ہےکہ ابتدائی تخمینے پر نظرِ ثانی کی جائے۔

XS
SM
MD
LG