رسائی کے لنکس

مبینہ گستاخ اسلام مظاہرین کے ہاتھوں قتل


مبینہ گستاخ اسلام کو تشدد کر کے قتل کرنے کے بعد نذر آتش کر دیا گیا (فائل فوٹو)۔

مبینہ گستاخ اسلام کو تشدد کر کے قتل کرنے کے بعد نذر آتش کر دیا گیا (فائل فوٹو)۔

بہاولپور ضلع کے ایک دوردراز قصبے میں مظاہرین نے اُس پولیس تھانے پر ہلہ بول دیا جہاں یہ مبینہ گستاخ اسلام زیر حراست تھا۔

پاکستان میں پولیس نے کہا ہے کہ ہزاروں مشتعل افراد نے قرآن کی بے حرمتی کے الزام میں ایک شخص کو تشدد کر کے ہلاک کرنے کے بعد اُس کی لاش کو نذر آتش کر دیا۔

یہ واقعہ بہاولپور ضلع کے ایک دوردراز قصبے احمد پور شرقیہ میں منگل کو پیش آیا جب مظاہرین نے اُس پولیس تھانے پر ہلہ بول دیا جہاں یہ مبینہ گستاخ اسلام زیر حراست تھا۔

مقامی پولیس افسر محمد اظہر گجر کے بقول تھانے میں تعینات محافظوں نے ہجوم کو روکنے کی کوشش کی جس پر مظاہرین مزید مشتعل ہو گئے۔ احتجاج میں شامل افراد پولیس کی کئی گاڑیوں کو نذر آتش کرنے اور اہلکاروں کو زخمی کرنے کے بعد زیر حراست شخص کو زبردستی اپنے ساتھ لے گئے۔

ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے اس پولیس افسر نے بتایا کہ مقتول پر قصبے کے لوگوں نے قرآن کے صفحات پھاڑ کر زمین پر پھینکنے کا الزام لگایا تھا جس کے بعد اسے پولیس نے گرفتار کر لیا تھا۔

تبصرے دکھائیں

XS
SM
MD
LG