رسائی کے لنکس

لاہور میں 1936 طلبا و طالبات نے تاریخی شاہی قلعہ کی موزیک پینٹنگ یا انسانی تصویر بنا کر گینیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں یہ کارنامہ اپنے نام کیا۔

پاکستان نے دنیا کی سب سے بڑی ’موزیک پینٹنگ‘ یا انسانوں کو ایک مخصوص ترتیب سے کھڑا کر کے بنائی گئی تصویر کا عالمی ریکارڈ قائم کر لیا۔

لاہور میں پیر کی شام 1936 طلبا و طالبات نے تاریخی شاہی قلعہ کی موزیک پینٹنگ یا انسانی تصویر بنا کر گینیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں یہ کارنامہ اپنے نام کیا۔

اس سے قبل ہفتہ اور اتوار کو بھی لاہور میں جاری پنجاب یوتھ فیسٹیول میں متعدد عالمی ریکارڈز بنائے گئے۔ ان میں سب سے زیادہ افراد کا یک زبان ہو کر قومی ترانہ گانے کا عالمی ریکارڈ بھی شامل ہے۔

منتظمین کے مطابق یہ ترانہ لگ بھگ 70 ہزار افراد نے مل کر گایا تاہم گینیز ورلڈ ریکارڈ کے نمائندے کا کہنا تھا کہ انھوں نے 42813 افراد کی آوازیں ریکارڈ کیں۔

اس سے قبل یہ ریکارڈ بھارت کے پاس تھا جہاں رواں سال 25 جنوری کو 15243 افراد نے یک زبان ہوکر اپنا قومی ترانہ گایا تھا۔

علاوہ ازیں فیصل آباد سے تعلق رکھنے والے محمد صدی نے مونچھوں سے 1700 کلو گرام وزنی بھاری ٹرک کو 60.3 میٹر تک کھینچنے، احمد بودلہ نے تین منٹ میں 616 کِکس لگانے، نعمان انجم نے 35 سیکنڈ میں پلگ میں تار لگانے، محمد منشا نے تین منٹ 14 سیکنڈ میں تین چپاتیاں پکانے، قمر زمان اور ڈینیئل گِل نے فٹ بال کو سر سے مسلسل 335 بار اچھالنے کا عالمی ریکارڈ قائم کیا۔

12 سالہ مہک نے سب سے کم وقت یعنی 45 سیکنڈ میں شطرنج کی بساط بچھانے اور جلیل الحسن نے ایک منٹ آٹھ سیکنڈ میں کرکٹ کی کِٹ پہننے کا عالمی ریکارڈ قائم کیا۔

تبصرے دکھائیں

XS
SM
MD
LG