رسائی کے لنکس

صوبے میں موبائل فون سروس بھی 12 ربیع الاول کو عارضی طور پر معطل رہے گی۔ پہلی مرتبہ جلسوں کی آڈیو اور ویڈیو ریکارڈنگ پر بھی پابندی رہے گی۔

سندھ کے پانچ شہروں میں جمعہ 10جنوری سے بدھ 15جنوری کی درمیانی شب بارہ بجے تک موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

اس عرصے میں کسی کو بھی اسلحہ کی سر ِعام نمائش کی اجازت نہیں ہوگی جبکہ اس بات کے بھی قوی امکانات ہیں کہ منگل کو 12ربیع الاول والے روز موبائل فون سروس بھی معطل کردی جائے۔

محکمہ ِداخلہ سندھ کے مطابق پانچ شہروں میں کراچی، حیدرآباد، سکھر، میرپور خاص اور لاڑکانہ شامل ہیں۔ پابندی کے دوران کسی بھی قسم کا اسلحہ ساتھ لیکر چلنے یا اسے دکھانے پر بھی پابندی عائد رہے گی۔

اس مرتبہ پہلی بار ربیع الاول والے روز آڈیو اور ویڈیوریکارڈنگ پر بھی پابندی ہوگی جبکہ فون سروس کی معطلی کے لئے صوبائی حکومت وفاقی وزارت ِداخلہ سے رابطہ کر رہی ہے۔

تجزیہ نگاروں کا کہنا ہے کہ چونکہ پچھلے سال بھی خاص خاص تہواروں پر موبائل فون سروس عارضی طور معطل رہی تھی اس لئے اس بات کے امکانات زیادہ ہیں کہ وفاقی حکومت فون سروس معطل کی درخواست کو منظور کرلے گی۔

محکمہ داخلہ سندھ کا کہنا ہے کہ یہ اقدامات دہشت گردی کے کسی بھی قسم کے واقعہ سے بچنے کے لئے اٹھایا جارہا ہے۔ محکمے کا کہنا ہے کہ بارہ ربیع الاول کے موقع پر امن و امان کی صورتحال اور دہشت گردی کے خطرے کے پیش ِنظر کراچی سمیت پانچ شہروں میں موٹر سائیکل کی ڈبل سواری ، اسلحہ کی نمائش اور ہوائی فائرنگ پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

محکمے نے اسلحہ لے کر ساتھ چلنے سے متعلق تمام خصوصی اجازت نامے بھی 15جنوری کی رات 12بجے تک منسوخ کردیئے ہیں۔
XS
SM
MD
LG