رسائی کے لنکس

سان فرانسسکو کی ایک سوساٹھ سالہ پرانی بیکری

  • ندیم یعقوب

سان فرانسسکو میں بودن بیکری

سان فرانسسکو میں بودن بیکری

امریکی شہر سان فرانسسکو کی ایک بیکری بودن کی تیار کردہ ساور ڈو بریڈ علاقے میں کافی شہرت رکھتی ہے۔ اس بیکری پر مقبول ترش ذائقے کی روزانہ دس ہزار سے زیادہ ڈبل روٹیاں تیار کی جاتی ہیں، جو ہاتھوں ہاتھ بک جاتی ہیں۔

سان فرانسسکو ، دنیا بھر کے سیاحوں کے لیے بھی بڑی کشش رکھتا ہے اور اس شہر میں سیاحوں کے دیکھنے اور لطف اٹھانے کے لیے بہت کچھ موجود ہے۔ جن میں چائنا ٹاؤن میں واقع بودن بیکری بھی شامل ہے۔ جہاں دن بھر ان کی مخصوص ڈبل روٹی کے پرستاروں کی بھیٹر لگی رہتی ہے۔ ان میں سے اکثر دوسرے علاقوں سے آنے والے سیاح ہوتے ہیں۔

جو لوگ بیکری کے اندر جاکر ڈبل روٹی خریدنا نہیں چاہتے ، وہ باہر سڑک پر کھڑے ہوکر ہی لوگوں کی اشتیاق کا لطف اٹھاتے ہیں۔ مگر بیکری کی انتظامیہ نے ہمیں یہ اجازت دی کہ ہم بیکری کے اندرونی حصے میں جاکر شہر بھر میں شہرت رکھنے والی ڈبل روٹی کو بنتا ہوا بھی دیکھیں ۔

ہمیں اندر آکر دیکھنے کی اجازت دی ۔

فرنینڈو پاڈیلا ، بیکنگ شعبے کے انچارج ہیں۔ اور وہ گذشتہ 31 سال سے اس بیکری کے لیے کام کررہے ہیں۔ وہ اپنی ڈبل روٹی کو مخصوص ترش ڈائقہ دینے کے لیے اس میں ایک خاص قسم کا خمیر ملاتے ہیں۔

ان کا کہناہے کہ وہ اپنی ڈبل روٹی کے لیے جو خمیر استعمال کرتے ہیں، وہ تقریباً 160 سال پہلے اسی بیکری میں تیار کیا گیاتھا، اور اسی خمیر کی پرورش کرکے اسے ڈیڑھ صدی سے بھی زیادہ عرصے سے مسلسل استعمال کیا جارہاہے۔

فرنینڈو کا کہناہے کہ سان فرانسسکو کی مخصوص آب وہوا کے باعث یہاں تیار کیا جانے والا خمیر قدرتی طورپر ترشی مائل ہوتا ہے۔

یہ بیکری اس زمانے میں قائم کی گئی تھی جب امریکہ میں نیا نیا سونا دریافت ہواتھا۔ اور اس علاقے کو گولڈ رس کا نام دیا گیاتھا۔ سونے کی کشش دوردراز سے لوگوں کو یہاں کھینچ لائی اور وہ مغربی ساحلی علاقوں میں آباد ہوتے چلے گئے ۔

بودن بیکری کا آغاز آئسادورے بودن نے کیا تھا جو فرانس سے یہاں آکر آباد ہوئے تھے۔

ماسٹر بیکر نے بتایا کہ ایک روٹی بنانے کا عمل تین دن میں مکمل ہوتا ہے۔ یہاں مختلف جانوروں اور پرندوں کی شکلوں کی ڈبل روٹیاں بنائی جاتی ہیں۔

بودن بیکری کا شمار شہر کے سب سے پرانے کاروباروں میں ہوتا ہے۔ اورسیاحوں کی دلچسپی کے باعث بیکری کے ایک حصے میں اس کی تاریخ پر ایک چھوٹا سا میوزیم بھی بنا یا ہے۔

میوزیم کے گائیڈ ٹیری ہیم برگ کا کہناہے کہ یہ بیکری 1849ء میں قائم کی گئی تھی۔ اس وقت شہر میں 70 بیکریاں تھیں جن کے درمیان سخت مقابلہ تھا۔بودن کا پورا خاندان اس کاروبار سے منسلک تھا۔

اس زمانے میں ہر صج تازہ روٹی بیکرز اپنی ڈبل روٹی لوگوں کے دروازوں پر پہنچاتے تھے ۔اور اس مقصد کے لئے جس طرح کی گھوڑا گاڑی استعمال ہوتی اس کا ایک نمونہ بھی وہاں موجود ہے۔

1941ء میں اسٹیون گریڈو نے اس بیکری کو خرید لیا، مگر اس کی روایات کو جاری رکھا۔ اوراس میں جدید مشینیں نصب کیں۔فرنینڈو کو فخر ہے کہ وہ اس بیکری کی تاریخی روایت کو برقرار رکھے ہوئے ہیں۔

XS
SM
MD
LG