رسائی کے لنکس

پاکستان کا فٹ بال کھلاڑی امریکی نمائندگی کا خواہاں


دائیں ہاتھ پر پہلے

دائیں ہاتھ پر پہلے

دوراب نے کہا ہے کہ پاکستان میں فٹبال کو حکومت کی ’بھرپور سرپرستی حاصل نہیں‘، جس کی وجہ سے، ’بڑی صلاحیتوں کے باوجود، کھلاڑی بین الاقوامی سطح پر ملک کا نام روشن نہیں کر پاتے‘

فٹ بال کے نوجوان کھلاڑی، محمد دوراب الیاس نیپال اور بھارت کے مقابلوں میں پاکستان کی نمائندگی کر چکا ہے۔ اب وہ بین الاقوامی مقابلوں میں امریکہ کی نمائندگی کا خواہاں ہے۔

اسلام آباد کا 18 سالہ محمد دوراب الیاس ترکِ وطن کرکے امریکہ کے علاقے ورجنیا میں اپنے والد کے پاس پہنچ گیا ہے۔ سوکر (فٹ بال) کا یہ نوعمر کھلاڑی، بحثیت گول کیپر، اسلام آباد لیگ اور نیپال میں ہونے والے ساؤتھ ایشن سوکر کپ میں نمایاں کارکردگی دکھانے کے بعد، دو تا سات فروری تک بھارتی شہر گوا میں ہونے والے ساؤتھ ایشن فٹبال ٹورنامنٹ میں بھی پاکستان کی نمائندگی کے لئے چنا گیا ہے۔

محمد دوراب الیاس نے ’وائس آف امریکہ‘ کے دورے میں بتایا کہ وہ کسی امریکی کلب میں شمولیت اختیار کرے گا، ’اور سخت محنت سے‘ پاکستان میں حاصل کردہ مقام کو امریکہ میں بھی ثابت کرنے کی بھرپور کوشش کرےگا۔

دوراب کا کہنا تھا کہ پاکستان میں فٹبال کو حکومت کی بھرپور سرپرستی حاصل نہیں، جس کی وجہ سے بڑی صلاحیتوں کے باوجود کھلاڑی بین الاقوامی سطح پر ملک کا نام روشن نہیں کر پاتے۔

اس نے کہا کہ وہ ہر روز دو گھنٹے پریکٹس کرتا ہے اور اپنی صلاحیت کو مزید بہتر بنانے کے لئے کوشاں ہے۔ اس لئے، اُنھیں یقین ہے کہ امریکہ میں بھی ان کی صلاحیتوں کا اعتراف کیا جائے گا۔

دوراب نے کہا کہ وہ پاکستان کے بعد اب امریکہ کی بین الاقوامی سطح پر نمائندگی کرنے کا خواہاں ہے اور سخت محنت سے اپنا یہ خواب شرمندہ تعبیر کرنے کا عزم رکھتا ہے۔

دوراب کا کہنا تھا کہ ’میں پاکستان کو دل میں رکھ کر امریکہ کے لئے کھیلنا چاہتا ہوں،‘ اور اگر سرپرستی نصیب ہوئی، تو وہ بہت جلد امریکہ میںٕ بھی اپنا مقام حاصل کرسکوں گا۔

XS
SM
MD
LG