رسائی کے لنکس

صومالی پناہ گزینوں میں اضافہ ہو رہا ہے : اقوامِ متحدہ

  • خلیل بگھیو

موقادیشو: 2007ء سے اب تک پندرہ لاکھ لوگ شہر چھوڑ چکے ہیں

موقادیشو: 2007ء سے اب تک پندرہ لاکھ لوگ شہر چھوڑ چکے ہیں

اِس قسم کی اطلاعات کی وجہ سے کہ حکومت مذہبی ملیشیا گروپوں کے خلاف جلد ہی کوئى بڑا حملہ شروع کرنے والی ہے، لوگوں نے شہر سے بھاگنا شروع کردیا ہے

پناہ گزینوں کے لیے اقوامِ متحدہ کے ادارے نے کہا ہے کہ لڑائیوں کی وجہ سے صومالیہ کے دارالحکومت مُقا دیشو سے نکلنے والے لوگوں کی تعداد بڑھتی جارہی ہے۔

پناہ گزینوں کے لیے اقوامِ متحدہ کے ہائى کشنرہ کی ترجاہن نے جمعے کے روز کہا ہے کہ اس قسم کی اطلاعات کی وجہ سے کہ حکومت مذہبی ملیشیا گروپوں کے خلاف جلد ہی کوئى بڑا حملہ شروع کرنے والی ہے، لوگوں نے شہر سے بھاگنا شروع کردیا ہے۔میلِیسا فلیمنگ سے کہا ہے کہ اُن کی ایجنسی ہمسایہ ملکوں کو فرار ہونے والے پناہ گزینوں کو امداد فراہم کرنے کے لیے حرکت میں آگئى ہے۔

اقوامِ متحدہ کی پناہ گزینوں کی ایجنسی نے کہا ہے کہ فروری کا مہینہ شروع ہونے کے بعد سے 8000 سے زیادہ لوگ تشدّد سے بچنے کے لیے مقا دیشو سے نکل چکے ہیں۔

جمعے کے روز حکومت کی فوج اور الشّباب سے وابستہ باغیوں کے درمیان لڑائى میں کم سے کم پانچ افراد ہلاک اور 17 زخمی ہوگئے۔

حکومت نے اُن کٹّر مذہبی جنگجوؤں کے خلاف کسی بڑی فوجی کارروائى کا وعدہ کیا ہوا ہے، جو دارالحکومت کے بڑے بڑے حصّوں پر قابض ہیں۔

XS
SM
MD
LG