رسائی کے لنکس

سری لنکا: شکست خوردہ صدارتی اُمیدوار کے دفتر پر پولیس کا چھاپا


جنرل فونسیکا

جنرل فونسیکا


عینی شاہدوں اور فوج کے سابق سربراہ سرتھ فونسیکا کے مُشیروں کا کہنا ہے کہ سری لنکا کی پولیس نے ہارے ہوئے صدارتی اُمید وار کے دفتر پر چھاپا مارا ہے۔

اخباری اداروں کا کہنا ہے کہ پولیس نے جمعے کے چھاپے کے دوران کم سے کم 13 افراد کو گرفتار کر لیا۔ جنرل فونسیکا اُس وقت کولمبو میں اپنے دفتر میں نہیں تھے۔

حزبِ اختلاف کے سیاست دانوں نے کہا ہے پولیس بھگوڑے فوجیوں کو تلاش کر رہی تھی۔

سری لنکا کے الیکشن کمیشن نے بدھ روز صدر راجا پاکسے کو کئى عشروں بعد ملک میں زمانہ امن کے دروان پہلے صدارتی انتخاب میں کامیاب قرار دے دیا تھا۔ اس کے باوجود مسٹر فونسیکا نے اپنی شکست تسلیم کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ فوج کے سابق کمانڈر کا دعویٰ ہے کہ ووٹنگ میں دھاندلی کی گئى تھی۔

اسی دوران یورپی یونین نے بھی امریکہ کا ساتھ دیتے ہوئے سری لنکا کی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ الیکشن میں فراڈ کے الزامات کی چھان بین کرائے۔

یورپی یونین نے ایک بیان جاری کیا ہے جس میں اُس نے سری لنکا کے صدر مہندا راجاپاکسے کو دوبارہ صدر منتخب ہونے پر مبارک باد دی ہے۔ لیکن ساتھ ہی الیکشن میں دھاندلیوں کے الزامات پر تشویش کا اظہار بھی کیا ہے۔

XS
SM
MD
LG