رسائی کے لنکس

عراق: خود کش حملے میں 19 افراد ہلاک


حملہ اس وقت کیا گیا جب فوجی اہلکار اور مقامی ملیشیا کے رضاکار ایک دفتر سے اپنی تنخواہیں وصول کرنے کے لیے جمع تھے۔

عراق میں سرکاری فوج اور حکومت کے حامی لشکر کے سپاہیوں پر کیے جانے والے ایک خود کش حملے میں لگ بھگ 19 افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

حکام کے مطابقحملہ بغداد کے شمال میں واقع قصبے تاجی میں اس وقت کیا گیا جب فوجی اہلکار اور مقامی ملیشیا کے رضاکار ایک دفتر سے اپنی تنخواہیں وصول کرنے کے لیے جمع تھے۔

دھماکے میں 40 افراد زخمی بھی ہوئے ہیں جنہیں نزدیکی اسپتالوں میں منتقل کیا گیا ہے۔

گزشتہ روز بھی عراق کے شہر کرکک میں مقامی پولیس کے صدر دفتر پر کیے جانے والے ایک خود کش حملے میں کم ا زکم 15 افراد ہلاک اور لگ بھگ 150 زخمی ہوگئے تھے۔

پولیس حکام کے مطابق کار سوار خود کش حملہ آور کے ہمراہ اس کے کئی ساتھی بھی تھے جو پولیس افسران کی وردیوں میں ملبوس تھے۔

حکام کا کہنا ہے کہ اتوار کو ہونےو الے حملے میں کئی نزدیکی عمارات اور دکانیں بھی تباہ ہوئیں۔ بعض خبروں میں ہلاک شدگان کی تعداد 30 سے زائد بھی بتائی گئی ہے۔

دونوں خود کش حملوں کی ذمہ داری تاحال کسی تنظیم نے قبول نہیں کی ہے۔
XS
SM
MD
LG