رسائی کے لنکس

قصہ پاکستانی خاتون اور نومولود بچے کا


فائل

فائل

اطلاعات کے مطابق، بھارتی امیگریشن حکام نے کہا ہے کہ پاسپورٹ اور ویزا نہ ہونے کے باعث نوزائیدہ اپنی ماں کے ساتھ پاکستان نہیں جا سکتا

اطلاعات کے مطابق، والد سے ملنے بھارت جانے والی ایک پاکستانی شہری، فاطمہ کے ہاں بیٹے کی ولادت کے بعد بھارتی حکام نے فاطمہ کو اسکے بیٹے سمیت پاکستان جانے سے روک دیا ہے۔

بتایا گیا ہے کہ بھارتی امیگریشن حکام کا یہ انکار نو مولود کے پاس پاسپورٹ اور ویزا نہ ہونے کی بنا پر کیا گیا ہے۔

فاطمہ کا تعلق سندھ کے ضلع گھوٹکی سے بتایا جاتا ہے، جو شوہر کے ہمراہ اپنے بوڑھے والد سے ملنے بھارت پہنچی تھی۔

بھارت میں دو ماہ رہنے کے دوران، فاطمہ کے ہاں بیٹے کی ولادت ہوئی جس کے بعد، دونوں میاں بیوی اپنے نومولود بچے کے ساتھ پاکستان واپس آنے لگے، تو بھارتی حکام نے انھیں اسٹیشن پر ہی روک لیا۔

بھارتی حکام کا کہنا ہے کہ پاکستانی شہری اپنے نومولود بیٹے کو بھارت میں ہی چھوڑ دیں یا پھر وہیں رک کر پاکستانی ہائی کمیشن سے رابطہ کرکے دستاویزات مکمل کریں یا بچے کا ویزا بنوائیں، تب ہی انھیں بیٹے کے ساتھ واپسی کی اجازت ہوگی۔

ادھر، میڈیا رپورٹس کے مطابق، پاکستانی بچے کو بھارت کی جانب سے پیدائش کا سرٹیفکٹ جاری کر دیا گیا ہے۔
XS
SM
MD
LG