رسائی کے لنکس

بنکاک بم حملے کے دو مشتبہ ملزموں کے وارنٹ گرفتاری جاری


پیر کو جاری کی گئی دو مشتبہ ملزموں کی تصاویر

پیر کو جاری کی گئی دو مشتبہ ملزموں کی تصاویر

پولیس کے قومی ترجمان پراوت تھاورن سری نے پیر کو بتایا کہ بنکاک کے من بوری علاقے میں ایک اپارٹمنٹ سے یوریا کھاد، بارود اور ڈیجیٹل گھڑیوں کے علاوہ دیگر سامان بھی ملا ہے۔

بنکاک میں اس ماہ ہونے والے مہلک بم حملے کی تحقیقات کرنے والے پولیس اہلکاروں کا کہنا ہے کہ انہوں نے ایک اور اپارٹمنٹ پر چھاپہ مار کر بم بنانے کا سامان برآمد کر لیا ہے۔

پولیس نے ایک 26 سالہ تھائی خاتوں اور ایک غیر ملکی کے وارنٹ گرفتاری بھی جاری کیے ہیں۔

پیر کی دوپہر تھائی لینڈ کے تمام ٹیلی ویژن چینلوں پر ایک خاتون کی تصویر ایک اور ایک مشتبہ غیر ملکی کا خاکہ دکھایا گیا۔ حجاب اوڑھے ہوئے اس خاتوں کا نام وانا سوانسان بتایا گیا ہے جبکہ مشتبہ مرد کا نام نہیں بتایا گیا۔

حملے تحقیقات کے نتیجے میں اتوار کو پولیس نے ایک اپارٹمنٹ بلڈنگ پر چھاپہ مار کر بم بنانے کا سامان برآمد کیا۔ پولیس کے قومی ترجمان پراوت تھاورن سری نے پیر کو بتایا کہ بنکاک کے من بوری علاقے میں ایک اپارٹمنٹ سے یوریا کھاد، بارود اور ڈیجیٹل گھڑیوں کے علاوہ دیگر سامان بھی ملا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ’’یہ بم بنانے کا سامان ہے۔ کوئی بھی گھر میں یوریا کھاد اور بارود نہیں رکھے گا علاوہ اس کے کہ اس نے بم بنانا ہو۔‘‘

اس چھاپے کے دوران کسی کو گرفتار نہیں کیا گیا۔

ہفتہ کو پولیس نے من بوری کے قریب ایک اور آبادی سے ایک شخص کو گرفتار کیا تھا جس کے بارے میں شبہ ہے کہ وہ تھائی لینڈ کے سب سے مہلک حملے میں ملوث ہے جس میں دو ہفتے قبل 20 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔ اس چھاپے کے دوران بم بنانے کا سامان بھی برآمد ہوا تھا۔

مشتبہ شخص کی گرفتاری کے فوراً بعد بنکاک کی پولیس نے کہا تھا کہ یہ شخص ترکی کا شہری ہے۔ پولیس نے اس شخص کے ترکی کے جعلی پاسپورٹ کی تصویر جاری کی تھی جس میں کئی غلطیوں کی نشاندہی کی گئی جس کے بعد پولیس نے یہ بیان واپس لے لیا۔

پراوت نے اتوار کو نامہ نگاروں کو بتایا کہ بنکاک میں ترکی کے سفارت خانے نے اس بات کی تردید کی ہے کہ گرفتار ہونے والا شخص ترک شہری ہے۔

اس شخص کے اپارٹمنٹ کے دو کمروں میں بم بنانے کا سامان بکھرا پڑا تھا۔

پولیس نے کہا ہے کہ اپارٹمنٹ سے ملنے والے فیوز، پائپ اور بال بیرنگ ایسے ہی ہیں جیسے ایراوان مندر کے قریب بم دھماکے میں استعمال ہوئے۔

پولیس نے ہفتے کو کہا تھا کہ مشتبہ شخص انسانی سمگلنگ کرنے والے ایک گینگ کا حصہ تھا۔

پراوت نے کہا کہ ’’وہ اس بات سے ناراض ہیں کہ پولیس غیر قانونی طور پر ملک میں داخل ہونے والے لوگوں کو کیوں گرفتار کر رہی ہے۔‘‘

XS
SM
MD
LG