رسائی کے لنکس

’موت کا سوداگر‘: امریکہ حوالگی میں حائل ایک اور قانونی رکاوٹ دور


وکٹر بوٹ کو سخت حفاظتی حصار میں عدالت سے لے جایا جارہا ہے

وکٹر بوٹ کو سخت حفاظتی حصار میں عدالت سے لے جایا جارہا ہے

تھائی لینڈ کی ایک عدالت نے اسلحے کے مشتبہ روسی تاجر وکٹر بوٹ پر سرمائے کی غیرقانونی طور پر منتقلی اور دھوکہ دہی کے الزامات کو خارج کردیا ہے جس سے اس کی امریکہ کو حوالگی میں حائل ایک رکاوٹ دور ہوگئی ہے۔

اعلیٰ عدالت نے گذشتہ ماہ فیصلہ سنایا تھا کہ بوٹ کو امریکہ کے حوالے کردینا چاہیے مگر اس سے قبل ہی امریکہ نے اپنے موقف کے خلاف فیصلہ آنے کے پیش نظر ملزم پر نئے الزامات عائد کیے تھے۔ منگل کو بنکاک کی کریمنل کورٹ نے ان نئے الزامات کو عدم ثبوت کی بنا پر مسترد کردیا۔

روس نے امریکہ کی طرف سے بوٹ کی حوالگی کی کوششوں پر شدید احتجاج کیا ہے۔وکٹر بوٹ روسی فضائیہ کا ایک سابق افسر بھی ہے اور باور کیا جاتا ہے کہ روسی سلامتی کے حوالے سے اس کے پاس حساس معلومات ہوسکتی ہیں۔

43سالہ وکٹر بوٹ المعروف”موت کا سوداگر“ کو مارچ 2008ء میں امریکہ کی زیرقیادت ایک کارروائی میں گرفتار کیا گیا تھا۔

اس مقدمے نے تھائی لینڈ کو دوراہے پر کھڑا کردیا ہے کیونکہ تھائی لینڈ امریکہ کا اتحادی ہے جب کہ روس اس کا اہم تجارتی حلیف ہے۔

XS
SM
MD
LG