رسائی کے لنکس

نوجوان پرفیوم چوک، گلستان جوہر میں واقع ’نعمان گرینڈ سٹی‘ کے رہائشی ہیں جن کی گمشدگی کے خلاف منگل کو اہل محلہ اور اہل خانہ نے احتجاج کیا، ٹائر جلائے اور سڑک بند کردی جس سے دو طرفہ ٹریفک معطل ہوگیا

کراچی سے شادی کی تقریب میں شرکت کے لئے حیدرآباد جانے والے 13نوجوان لاپتہ ہوگئے ہیں۔ تمام نوجوان آپس میں دوست ہیں۔ واقعہ پیر کی رات پیش آیا۔ تاہم، منگل کو رات گئے تک ان کا کوئی سراغ نہیں مل سکا تھا۔

نوجوان پرفیوم چوک، گلستان جوہر میں واقع ’نعمان گرینڈ سٹی‘ کے رہائشی ہیں جن کی گمشدگی کے خلاف منگل کو اہل محلہ اور اہل خانہ نے احتجاج کیا، ٹائر جلائے اور سڑک بند کردی جس سے دو طرفہ ٹریفک معطل ہوگیا۔

اہل خانہ کا کہنا ہے کہ پولیس اور سیکورٹی کے ذمے دار دوسرے ادارے جلد از جلد نوجوانوں کی گمشدگی کا پتہ لگائیں۔ اپنے مطالبات کے حق میں انہوں نے نعرے بھی لگائے۔

سپرنٹنڈنٹ آف پولیس، عابد قائم خانی کے مطابق نوجوانوں کے اہل خانہ نے 13 افراد کی بازیابی کے لئے پولیس کو دی گئی درخواست میں دعویٰ کیا ہے کہ تمام دوست تین گاڑیوں میں سوار شادی کی تقریب میں شرکت کے لئے حیدرآباد جارہے تھے کہ راستے میں نامعلوم افراد نے انہیں روکا اور زبردستی اپنے ساتھ لے گئے۔ تب سے اب تک ان کے بارے میں کچھ معلوم نہیں ہوسکا ہے۔

ادھر متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے ایک بیان میں دعویٰ کیا ہے کہ لاپتہ نوجوانوں میں سے چار ایم کیو ایم کے کارکن اور باقی ان کے حامی اور ہمدرد ہیں۔ آخری مرتبہ ان کا اپنے گھر والوں سے پیر کی رات ساڑھے دس بجے فون پر رابطہ ہوا تھا تب سے اب تک ان کے بارے میں کچھ پتہ نہیں چل سکا۔

رابطہ کمیٹی نے وزیر اعظم، وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان، وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ اور وزیر داخلہ سندھ سے کارکنوں کا فوری پتہ چلانے کی ہدایات جاری کی ہیں۔

XS
SM
MD
LG