رسائی کے لنکس

ہلاک ہونے والوں میں تین فوجی اور کردستان ورکرز پارٹی کے تین عسکریت پسند شامل ہیں۔

ترکی کے جنوب مشرقی علاقے میں فوج اور کرد باغیوں کے درمیان ہونے والی جھڑپوں میں کم ازکم نو افراد ہلاک ہوگئے۔

ہفتہ کو حکام نے بتایا کہ ہلاک ہونے والوں میں تین فوجی اور کردستان ورکرز پارٹی (پی کے کے) کے تین عسکریت پسند شامل ہیں۔ یہ جھڑپیں عراق کی سرحد کے قریب حکاری صوبے میں ہوئیں۔

حکاری کے جنوب مغرب میں واقع بتلیس صوبے میں پیش آنے والے ایک اور واقعے میں حکومت کے حمایت یافتہ تین کرد دیہاتی محافظ عسکریت پسندوں سے لڑائی میں ہلاک ہوگئے۔

1984ء سے کردستان ورکرز پارٹی کی طرف سے علیحدہ کرد ریاست کے قیام کے لیے شروع کی گئی مسلح تحریک میں اب تک 40 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں جن میں اکثریت کردوں کی ہی ہے۔
XS
SM
MD
LG