رسائی کے لنکس

واشنگٹن، امریکی سفیر کو واپس شام بھیجنے کے لیے تیار ہے


فورڈ، روانی کے ساتھ عربی بول سکتے ہیں اور اس وقت وہ عراق میں امریکہ کے نائب سفیر کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے ہیں

امریکہ نے شام سے درخواست کی ہے کہ وہ 2005 کے بعد سے دمشق کے لیے امریکہ کے پہلے سفیر کی منظوری دے دے۔

شام کے وزیرِ خارجہ نے بدھ کے روز کہا ہے کہ امریکہ نے رابرٹ فورڈ کو سفیر نامزد کیا ہے۔ اور انہوں نے کہا ہے کہ شام امریکہ کی درخواست پر غور کررہا ہے۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ایک ترجمان نےاس بات کی تصدیق کی ہے کہ امریکہ نے حال ہی میں شام کو نامزد سفیر کا نام پیش کردیا ہے۔ لیکن ترجمان نےاُن کا نام بتانے سے انکار کردیا۔

فورڈ، روانی کے ساتھ عربی بول سکتے ہیں اور اس وقت وہ عراق میں امریکہ کے نائب سفیر کی حیثیت سے خدمات انجام دے رہے ہیں۔ وہ 2006 سے2008 تک الجزائر میں بھی امریکہ کے سفیر کی حیثیت سے کام کرچکے ہیں۔

امریکہ نے گذشتہ جون میں اعلان کیا تھا کہ وہ شام میں دوبارہ اپنے سفیر کو تعینات کرے گا۔


گذشتہ سال صدر باراک اوباما کے منصبِ صدارت پر فائز ہونے کے بعد، امریکہ اور شام کے تعلقات میں بہتری آنا شروع ہوگئى تھی۔ اوباما انتظامیہ کا کہنا ہے کہ مشرقِ وسطیٰ میں قیامِ امن کی کوششوں میں شام کی مدد نازک اہمیت کی حامل ہے۔

XS
SM
MD
LG