رسائی کے لنکس

گوانتامو جیل کے معاملے پر ویٹی کن سے مدد کی اپیل


فائل

فائل

'ویٹی کن' کے ترجمان کا کہنا ہے کہ یہ اپیل امریکہ کے وزیرِ خارجہ جان کیری نے اپنے ہم منصب کارڈینل پیٹرو پیرولِن کے ساتھ پیر کو ہونے والی ملاقات میں کی ہے۔

امریکہ نے رومن کیتھولک عیسائیوں کے مذہبی مرکز 'ویٹی کن' سے اپیل کی ہے کہ وہ خلیجِ گوانتانامو کے حراستی مرکز میں موجود قیدیوں کے مستقبل کا فیصلہ کرنے میں امریکہ کی مدد کرے۔

'ویٹی کن' کے ترجمان کا کہنا ہے کہ یہ اپیل امریکہ کے وزیرِ خارجہ جان کیری نے اپنے ہم منصب کارڈینل پیٹرو پیرولِن کے ساتھ پیر کو ہونے والی ملاقات میں کی ہے۔

'ویٹی کن ریڈیو' کی ویب سائٹ پر شائع ہونےو الے ترجمان فادر فیڈیریکو لومبارڈی کے ایک بیان کے مطابق امریکہ نے 'ہولی سی' سے درخواست کی ہے کہ وہ گوانتانامو کے باقی ماندہ قیدیوں کا "انسانی بنیادوں پر مناسب حل تلاش کرنے کی کوششوں" میں امریکہ کی مدد کرے۔

'ویٹی کن' کے ترجمان نے یہ وضاحت نہیں کی کہ امریکہ نے اس معاملے پر کیتھولک چرچ سے کس نوعیت کی مدد مانگی ہے۔

امریکی محکمۂ خارجہ کے ایک سینئر اہلکار نے خبر رساں ادارے 'رائٹرز' کو بتایا ہے کہ جان کیری نے اپنے 'ویٹی کن' ہم منصب کے ساتھ ملاقات کے دوران گوانتامو جیل کو بند کرنے کے اوباما انتظامیہ کے عزم کا اعادہ کیا۔

امریکی اہلکار کے مطابق سیکریٹری کیری نے ویٹی کن عہدیدار کو ان سفارتی کوششوں سے بھی آگاہ کیا جو امریکہ گوانتانامو میں باقی رہ جانے والی قیدیوں کو دیگر ملکوں کے سپرد کرنے کے لیے کر رہا ہے۔

یاد رہے کہ صدر اوباما نے اپنی انتخابی مہم میں گوانتانامو کے حراستی مرکز کی بندش کا وعدہ کیا تھا جہاں امریکہ نے 11 ستمبر 2001ء کے حملوں کے بعد شدت پسندی میں ملوث ہونے کے شبہ میں گرفتار کیے جانے والے غیر ملکی قیدیوں کو بغیر کسی قانونی کارروائی کے قید رکھا ہوا ہے۔

صدر اوباما 2009ء میں اقتدار سنبھالنے کے بعد سے ہی اپنے اس وعدے کو پورے کرنے کوشش کر رہے ہیں لیکن اس معاملے پر انہیں کانگریس، خصوصاً ری پبلکن ارکان کی شدید مخالفت کا سامنا ہے۔

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ گوانتانامو کے حراستی مرکز میں اب بھی 148 قیدی موجود ہیں جن کی منتقلی کے لیے مختلف حکومتوں کے ساتھ مذاکرات جاری ہیں۔

امریکہ ان قیدیوں کو ان کے آبائی ممالک کے حوالے نہیں کر نا چاہ رہا کیوں کہ اندیشہ ہے کہ ان قیدیوں کی متعلقہ حکومتیں انہیں دورانِ حراست تشدد کا نشانہ بناسکتی ہیں۔

امریکی قانون ساز ان قیدیوں کو امریکہ کی حدود میں قائم کسی جیل میں منتقل کرنے کی اجازت بھی نہیں دے رہے ہیں جس کے باعث اس حراستی مرکز کی بندش کھٹائی میں پڑی ہوئی ہے۔

تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ کیتھولک عقیدے کے حامل بعض لاطینی امریکی ممالک، بشمول یورا گوئے، ان قیدیوں کو قبول کرنے پر مشروط طور پر آمادہ ہیں اور امریکہ شاید انہی ممالک پر اثر و رسوخ استعمال کرنے کے لیے 'ہولی سی'سے کردار ادا کرنے کا خواہاں ہے۔

'ویٹی کن' کے بیان کے مطابق پیر کو جان کیری اور کارڈینل پیٹرو پیرولِن کے درمیان ویٹی کن میں ہونے والی ملاقات میں مشرقِ وسطیٰ میں جاری شدت پسندی، وہاں جاری بحرانوں کے خاتمے کی کوششوں اور اسرائیل اور فلسطین کے درمیان امن مذاکرات کی بحالی کا معاملہ بھی زیرِ غور آیا۔

XS
SM
MD
LG