رسائی کے لنکس

افغانستان میں فوج نےضرورت سے زیادہ ٹھیکے دار رکھ لیے ہیں: امریکی کمانڈر


جنرل میک کرسٹل

جنرل میک کرسٹل

افغانستان میں امریکہ کے چوٹی کے کمانڈر نے کہا ہے کہ فوج علاقے میں اپنی کارروائیوں میں مدد کے لیے حد بڑھ کر نجی ٹھیکے دراوں کو استعمال کررہی ہے۔

جنرل سٹینلی میک کرسٹل نے جمعے کے روز پیرس میں افسروں کے ایک اجتماع کو بتایا ہے کہ امریکہ اس قسم کے ٹھیکے داروں کا بہت زیادہ محتاج ہوگیا ہے اور یہ کہ اس سے کوئى مالی بچت نہیں ہوئى۔انہوں نے کہا کہ بہتر ہوگا کہ ان ٹھیکے داروں کی تعداد کو کم کردیاجائے، اور فوجی عملے اور اگر ضرورت ہو تو مقامی افغان لوگوں کو زیادہ استعمال کیا جائے۔

حالیہ برسوں میں وسائل کے ضیاع اور فراڈ کے سکینڈلوں کے سامنے آنے کے ساتھ ساتھ نجی ٹھیکے داروں پر نکتہ چینی ہوتی رہی ہے۔بعض ناقدین نےاُن ٹھیکے داروں کے مبیّنہ غلط انداز کار پر بھی اعتراض کیا ہے ، جن کے فرائص میں مسلح ذاتی محافظ فراہم کرنا اور فوج کے دوش بدوش انٹیلی جینس جمع کرنا شامل ہے۔

ایسی ہی ایک نجی کمپنی زی کے خلاف ، جو پہلے بلیک واٹر کہلاتی تھی، عراق اور افغانستان میں ہلاکتوں کے سلسلے میں چھان بین جاری ہے۔

XS
SM
MD
LG