رسائی کے لنکس

امریکہ: 91 سالہ سرطان کی مریضہ کی میراتھن میں شرکت


فائل فوٹو

فائل فوٹو

ہیریت نے اس پہلے بننے والے ریکارڈ کو توڑتے ہوئے فاصلہ سات گھنٹوں میں طےکیا۔ گزشتہ 16 برس میں وہ 15 مرتبہ ایسی دوڑ میں شرکت کر چکی ہیں۔

سرطان جیسے جان لیوا مرض میں مبتلا 91 سالہ امریکی خاتون ہیریت تھومپسن نے میراتھن دوڑ میں شرکت کرکے امریکی تاریخ کی دوسری عمر رسیدہ خاتون کا اعزاز حاصل کرلیا۔

ہیریت نے اس سے پہلے بننے والے ریکارڈ کو توڑتے ہوئے یہ فاصلہ سات گھنٹوں میں مکمل کیا۔ گزشتہ 16 برس میں وہ 15 مرتبہ ایسی دوڑ میں شرکت کر چکی ہیں۔

سینڈیاگو میں دوڑ سے پہلے ایک اخبار سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا ’’اکثر اوقات، میں دیکھتی تھی کہ لڑکیاں آتیں اور اکثر لڑکھڑا جاتیں۔ میرے خیال میں یہ بہت اچھا ہے کہ میں نے ایسا کچھ نہیں کیا۔‘‘

ہیریت نے 76 سال کی عمر سے میراتھن میں حصہ لینا شروع کیا لیکن کینسر کی وجہ سے گزشتہ سال وہ اس دوڑ میں شرکت نا کر پائیں۔

حال ہی میں ہیریت جلدی سرطان کے علاج کے عمل سے گزریں اور وہ گیارہ دنوں میں 9 مرتبہ ’’تابکاری طریقہ علاج" کے مرحلے سے گزریں۔

عمر رسیدہ خاتون کے بھائی رواں سال لوکیمیا کے مرض سے ہلاک ہوئے تھے اور ہر سال دوڑ میں ان کی شرکت کی وجہ ’’لوکیمیا اور لیمفوما سوسائٹی‘‘ کے لیے امداد جمع کرنا ہے۔

ہیریت کا کہنا تھا کہ اگر وہ زندہ رہیں تو آئندہ برس بھی سینڈیاگو میں ہونے والی میراتھن میں شرکت کریں گی۔
XS
SM
MD
LG