رسائی کے لنکس

اسکینڈل اوباما کی مقبولیت پر اثرانداز ہو رہے ہیں: رائے عامہ جائزہ


اعداد و شمار سے پتا لگتا ہے کہ مسٹر اوباما کی مقبولیت کی شرح ایک ماہ قبل کے مقابلے میں آٹھ فی صد کم ہوکر 45 فی صد پر آگئی ہے

’سی این این‘ کےایک رائے عامہ کے جائزے کےمطابق، اختلافی معاملات کے سر اٹھانے کے باعث امریکیوں کے نزدیک صدر براک اوباما کی مقبولیت پر منفی اثرات پڑ رہے ہیں۔

اعداد و شمار سے پتا چلتا ہے کہ مسٹر اوباما کی پسندیدگی کی شرح ایک ماہ قبل کے مقابلے میں آٹھ فی صد کم ہوکر 45فی صد پر آگئی ہے۔ سی این این کہتا ہے کہ یہ ڈیڑھ برس کی نچلی ترین سطح ہے۔

رائے عامہ کا یہ جائزہ امریکیوں کے خلاف حکومتی نگرانی کے انکشافات، ٹیکس ادارے کی طرف سے کنزرویٹو گروپوں کے ساتھ غیر منصفانہ رویہ برتنے کی خبریں، نامہ نگاروں کے ٹیلی فون ریکارڈ کا حصول کا معاملہ اور لیبیا میں ایک امریکی سفارتی تنصیب پر ہونے والے حملے پر انتظامیہ کی طرف سے اختیار کیے جانے والےطریقہٴکار پر اُٹھنے والے سوالات کے بعد کیا گیا۔

سی این این کے لیے رائے شماری کا کام کرنے والوں نے11سے 13جون کے درمیان ٹیلی فون پر 1000سے زائد امریکیوں سے سوالات کیے۔

تاہم، مسٹر اوباما کے بارے میں حال ہی میں ہونے والے دیگر حالیہ رائے عامہ کے جائزوں میں ملے جلے رجحان کا پتا لگتا ہے۔

گیلپ اور رسموسن سے معلوم ہوتا ہے کہ جائزے میں شرکت کرنے والوں میں صدر کی کارکردگی کو قبول کرنے والوں کے مقابلے میں ناپسند کرنے والوں کی تعداد زیادہ ہے۔

لیکن، ٹائم میگزین کے لیے کیے گئے ایک اور جائزے میں کہا گیا ہے کہ حصہ لینے والوں میں کم لوگوں کے مقابلے میں زیادہ تر نے اُن کے لیے پسندیدگی کا اظہار کیا۔
XS
SM
MD
LG