رسائی کے لنکس

مشرقِ وسطیٰ امن مذاکرات کے نئے دَور کے لیے امریکی کوشش


چار رُکنی بین الاقوامی گروپ نے اسرائیل پر زور دیا ہے کہ وہ آباد کاروں کے لیے تمام تعمیرات کو روک دے۔

امریکہ کے ایک عہدے دار نے اعلیٰ سطح پر مذاکرات کے ایک ایسے نئے دَور کا اعلان کیا ہے، جس کا مقصد اسرائیلی اور فلسطینیوں کے درمیان قیامِ امن کے مذاکرات کو دوبارہ شروع کرانا ہے۔

محکمہ خارجہ کے ترجمان پی جے کراؤلی نے کہا ہے کہ وزیرِ خارجہ ہلری کلنٹن جمعے کے روز واشنگٹن میں اُردن کے وزیرِ خارجہ ناصر جُودہ اور مصر کے وزیرِ خارجہ احمد ابو الغیث سے ملاقات کررہی ہیں۔ کراؤ لی نے کہا ہے کہ مشرقِ وسطیٰ کے لیے امریکہ کے ایلچلی جارج مِچل بھی ان مذاکرات میں شرکت کریں گے۔


کراؤلی نے کہا ہے کہ مِچل اُس کے بعد اتوار کے روز پیرس اور برسلز روانہ ہو جائیں گے، جہاں وہ غیر عرب اتحادیوں اور مشرقِ وسطیٰ میں امن کے لیے چارکنی بین الاقوامی گروپ کے دوسرے ارکان کے ساتھ صلاح مشورے کریں گے۔


اسرائیلی فلسطینی امن مذاکرات مہینوں سے تعطل میں پڑے ہوئے ہیں اور اس کی ایک وجہ مغربی کنارے کے علاقے میں اسرائیل کی جانب سے یہودی آباکاروں کی بستیوں کی تعمیر پر جاری تنازع ہے۔


چار رُکنی بین الاقوامی گروپ نے اسرائیل پر زور دیا ہے کہ وہ آباد کاروں کے لیے تمام تعمیرات کو روک دے۔ گروپ نے فلسطینی لیڈروں سے بھی مطالبہ کیا ہے کہ وہ تشدّد آمیز انتہا پسندی کا قلع قمع کریں اور اشتعال انگیزی کو ختم کریں۔

XS
SM
MD
LG