رسائی کے لنکس

اس تازہ ترین جائزے سے پتا چلتا ہے کہ آئیووا کے ممکنہ ووٹر خیال کرتے ہیں کہ ٹرمپ معیشت، دہشت گردی اور غیر قانونی تارکینِ وطن کے معاملے سے بہتر طور پر نبردآزما ہو سکتے ہیں؛ جب کہ کروز خارجہ پالیسی کو بہتر طور پر دیکھ سکتے ہیں، جنھیں زیادہ ایماندار اور سمجھدار خیال کیا جاتا ہے

آئیووا کی وسط مغربی ریاست میں ریپبلیکن پارٹی کے صدارتی امیدوار ڈونالڈ ٹرمپ اور ٹیڈکروز صدارتی انتخابی مہم کی سرگرمی میں پیش پیش ہیں، جنھیں پارٹی کے دیگر امیدواروں کے مقابلے میں خاصی سبقت حاصل ہے۔ یہ بات کیوئنی پیک یونیورسٹی کی عام جائزہ رپورٹ میں کہی گئی ہے۔

رائے عامہ کے اس نئے جائزے کے مطابق، کاروباری شخص، ٹرمپ کو 31 فی صد کی حمایت حاصل ہے، جب کہ اُن کے بعد ٹیکساس سے امریکی سینیٹر، کروز کو 29 فی صد مقبولیت حاصل ہے۔ سروے میں چار فی صد شرح غلطی کا امکان موجود ہے۔ اُن کے بعد، 15 فی صد کے عدد کے ساتھ قریب ترین امیدوار مارکو روبیو ہیں، جن کا تعلق فلوریڈا سے ہے۔

رائے عامہ کے اس جائزے کے علاوہ، ’این بی سی نیوز/وال اسٹریٹ جرنل/مارسٹ‘ کی جانب سے اتوار کو دوسرا سروے سامنے آیا ہے، جس سے بھی یہ پتا چلتا ہے کہ آئیوا میں ٹرمپ اور کروز قریب ترین امیدوار ہیں، لیکن اِس میں کروز کو سبقت حاصل ہے۔

اس تازہ ترین جائزے سے پتا چلتا ہے کہ آئیووا کے ممکنہ ووٹر خیال کرتے ہیں کہ ٹرمپ معیشت، دہشت گردی اور غیر قانونی تارکینِ وطن کے معاملے سے بہتر طور پر نبردآزما ہو سکتے ہیں؛ جب کہ کروز خارجہ پالیسی کو بہتر طور پر دیکھ سکتے ہیں، جنھیں زیادہ ایماندار اور سمجھدار خیال کیا جاتا ہے۔
آئیووا میں یکم فروری کو کائکسز منعقد کرتا ہے، جو صدارتی امیدواروں کے لیے پہلے امتحان کا درجہ رکھتا ہے؛ جس کے بعد 9 فروری کو نیو ہیمپشائر کی پرائمری منعقد ہوتی ہے۔

حالیہ عوامی جائزہ رپورٹوں سے پتا چلتا ہے کہ ڈیموکریٹک پارٹی سے تعلق رکھنبے والی ہیلری کلنٹن اور برنی سینڈرز بھی آئیووا کے ساتھ ساتھ نیو ہیمپشائر میں ایک دوسرے کے قریب تر ہیں۔

XS
SM
MD
LG