رسائی کے لنکس

امریکہ: ہم جنس شادیوں کے فیصلے کے خلاف درخواست دائر


ایریزونا میں قائم گروپ الائنس ڈیفنڈنگ فریڈم نے ہفتہ کو دائر کی گئی درخواست میں یہ موقف اختیار کیا کہ نویں امریکی سرکٹ کورٹ آف اپیل نے ہم جنس شادیوں کی اجازت قبل از وقت دی ہے۔

امریکہ میں ہم جنس شادیوں کے مخالفین نے کیلیفورنیا میں اس اقدام پر عائد پابندی ختم کرنے کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں درخواست دائر کی ہے۔

گزشتہ بدھ کو سپریم کورٹ نے شادی کے تحفظ کے 1996ء میں منظور کیے جانے والے وفاقی قانون کو کالعدم قرار دے دیاتھا۔ یہ قانون ہم جنس شادی شدہ جوڑوں کو سرکاری نوکریوں میں ٹیکس، صحت اور پنشن جیسے فوائد حاصل کرنے سے محروم رکھتا تھا۔ چار کے مقابلے میں پانچ ججوں نے ہم جنس شادیوں کے حق میں فیصلہ دیا۔

ایریزونا میں قائم گروپ الائنس ڈیفنڈنگ فریڈم نے ہفتہ کو دائر کی گئی درخواست میں یہ موقف اختیار کیا کہ نویں امریکی سرکٹ کورٹ آف اپیل نے ہم جنس شادیوں کی اجازت قبل از وقت دی ہے۔

گروپ کے وکلاء کی ٹیم میں شامل ایک سینیئر وکیل آسٹن نموکس نے کہا کہ پابندی ختم کرنے کا مقدمہ ابھی ختم نہیں ہوا کیونکہ چار کے مقابلے میں پانچ ججوں کی طرف سے کیے جانے والے اس فیصلے پر نظر ثانی کی درخواست دینے کے لیے ان کے موکل کے پاس ابھی 22 دن باقی ہیں۔

’’ ہمارے موکل کو وہ وقت نہیں دیا گیا کہ جس کا فیصلے پر نظر ثانی کے لیے قانونی راستہ اختیار کرنے کے لیے اسے دینے کا وعدہ کیا گیا تھا۔‘‘

نموکس نے ایک بیان میں کہا کہ اس پابندی کے حق میں رائے دینے والے کیلیفورنیا کے 70 لاکھ لوگ اس ’’ احترام کے حق دار ہیں جو انھیں قانونی نظام فراہم کرتا ہے۔‘‘
XS
SM
MD
LG