رسائی کے لنکس

جلد اقتدار چھوڑ دوں گا، صدر عبداللہ صالح


جلد اقتدار چھوڑ دوں گا، صدر عبداللہ صالح

جلد اقتدار چھوڑ دوں گا، صدر عبداللہ صالح

یمن کے صدر علی عبداللہ صالح نے کہا کہ وہ آنے والے دنوں میں اپنا عہدہ چھوڑ دیں گے۔

انہوں نے یہ اعلان ہفتے کے روز سرکاری ٹیلی ویژن پر اپنی ایک تقریر کے دوران کیا۔

مسٹر صالح گذشتہ 33 برسوں سے یمن کے صدرچلے آرہے ہیں، لیکن ملک میں تقریباً نو ماہ سے جاری حکومت مخالف تحریک سے ملک کا نظام مفلوج ہوتا جارہا ہے ۔ حکومت مخالفین مسلسل مسٹر صالح پر اقتدار چھوڑنے کے لیے زور دے رہے ہیں۔

حزب اختلاف کے سرگرم کارکنوں کا کہناہے کہ ملک میں اس وقت تک اصلاحات ناممکن ہیں جب تک مسٹر صالح اقتدار میں موجود ہیں۔

صدر علی عبداللہ صالح گذشتہ تقربیاً چار ماہ تک اپنے علاج معالجے کے سلسلے میں ملک سے باہر سعودی عرب میں مقیم رہے ہیں۔ جون میں صدارتی محل پر ایک قاتلانہ حملے کے دوران وہ شدید زخمی ہوگئے تھے۔

چھ ملکی خلیج تعاون کونسل نے طویل مذاکرات کے بعد ایک منصوبہ تشکیل دیا تھا جس میں مسٹر صالح سے کہا گیاتھا کہ وہ اقتدار اپنے نائب کے حوالے کردیں۔

حالیہ عرصے کے دوران مذاکرات کار یہ محسوس کرتے رہے کہ اقتدار کی منتقلی محض اب گھنٹوں کی بات ہے لیکن ہر بار آخری لمحات میں معاہدے پر عمل درآمد میں صدر کی جانب سے دستخطوں سے انکار کے باعث رکاوٹ پیش آجاتی رہی ہے۔

XS
SM
MD
LG