رسائی کے لنکس

logo-print

آزادی کپ کی تصویری جھلکیاں

لاہور میں تین روزہ آزادی کپ کے کامیاب انعقاد کے بعد پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کے دروازے کھل گئے ہیں۔ کئی سال پہلےلاہور میں سری لنکا اور پاکستان کے درمیان کرکٹ میچ کے موقو پر دہشت گرد حملے سے غیر ملکی ٹیمیں پاکستان کے دورے سے کترا رہی تھیں۔ عالمی کھلاڑیوں نے پاکستانیوں کے جوش و خروش کو سراہتے ہوئے سیکیورٹی کے انتظامات کی تعریف کی۔

آزادی کپ میں پاکستان نے تین میچوں کی سیریز دو ایک سے اپنے نام کی۔
ورلڈ الیون کے کھلاڑی تمیم اقبال کو موسٹ کلر فل اننگ کا ایوارڈ دیا گیا۔
پاک ٹیم کے کھلاڑی احمد شہزاد کو مین آف دی میچ کا ایوارڈ دیا گیا۔
ہاشم آملہ کو کولسٹ سیریز کا ایوارڈ دیا گیا۔
بابر اعظم کو مین آف دی سیریز کا ایوارڈ دیا گیا۔
شعیب ملک کو بوم بوم شارٹ آف دی میچ کا انعام دیا گیا۔
بابر اعظم نے اینرجیٹک پلیئر آف دی سیریز کا انعام بھی اپنے نام کیا۔
ڈیرن سمی کو بھی ایوارڈ دیا گیا۔

فیس بک فورم

XS
SM
MD
LG