رسائی کے لنکس

بیروت میں کچرے کے بحران پر احتجاج

لبنان کے دارالحکومت بیروت میں انتظامیہ کی جانب سے شہر سے کچرا نہ اٹھانے کے خلاف احتجاج کے لیے اتوار کو ہزاروں افراد شہر کے مرکز میں جمع ہوئے۔ شہر میں صفائی کے ناقص انتظامات کے خلاف ہونے والا یہ مظاہرہ حکومت مخالف پرتشدد احتجاج میں تبدیل ہوگیا۔ مظاہرین نے پولیس اہلکاروں پر پتھراؤ کیا جس کے جواب میں پولیس نے ان پر واٹر کینن سے پانی برسایا اور آنسو گیس کے شیل فائر کیے۔
مزید

بیروت میں بلدیہ کے اہلکار پرتشدد احتجاج کے بعد سرکاری عمارت کے باہر جمع ہونے والا کچرا اٹھا رہے ہیں
1

بیروت میں بلدیہ کے اہلکار پرتشدد احتجاج کے بعد سرکاری عمارت کے باہر جمع ہونے والا کچرا اٹھا رہے ہیں

لبنان کے وزیر داخلہ نوحاد مشنوک بیروت شہر کے مرکز میں کچرے کے بحران کے خلاف ہونے والے پرتشدد احتجاج کے بعد علاقے کا دورہ کر رہے ہیں
2

لبنان کے وزیر داخلہ نوحاد مشنوک بیروت شہر کے مرکز میں کچرے کے بحران کے خلاف ہونے والے پرتشدد احتجاج کے بعد علاقے کا دورہ کر رہے ہیں

احتجاج میں شریک لوگوں پر پولیس اہلکار واٹر کینن کے زریعے پانی برسا رہے ہیں۔ مظاہرے کے منتظمین کا کہنا ہے کہ جھڑپوں کے نتیجے میں 43 مظاہرین زخمی ہوئے ہیں
3

احتجاج میں شریک لوگوں پر پولیس اہلکار واٹر کینن کے زریعے پانی برسا رہے ہیں۔ مظاہرے کے منتظمین کا کہنا ہے کہ جھڑپوں کے نتیجے میں 43 مظاہرین زخمی ہوئے ہیں

مظاہرین حکومت کے خلاف نعرے بازی کر رہے ہیں جبکہ پولیس مظاہرین پر واٹر کینن سے پانی برسا رہی ہے۔
4

مظاہرین حکومت کے خلاف نعرے بازی کر رہے ہیں جبکہ پولیس مظاہرین پر واٹر کینن سے پانی برسا رہی ہے۔

مزید لوڈ کریں

XS
SM
MD
LG