رسائی کے لنکس

امریکہ کے فوجی اڈے ’فورٹ ہڈ‘ میں فائرنگ

امریکہ کی ریاست ٹیکساس میں فوجی اڈے "فورٹ ہُڈ" میں ایک فوجی نے فائرنگ کر کے تین اہلکاروں کو ہلاک اور 16 افراد کو زخمی کر دیا۔ بیس کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل مارک ملی نے بتایا کہ فائرنگ کرنے والا اہلکار 2011 میں چار ماہ تک عراق کی جنگ میں تعینات رہ چکا تھا۔ ان کے بقول وہ نفیساتی دباؤ اور اضطراب کا شکار ہونے کی وجہ سے ان دنوں زیر علاج تھا۔
مزید

امریکہ کی ریاست ٹیکساس کے فوجی اڈے "فورٹ ہُڈ" میں ایک فوجی سکیورٹی پر مامور ہے۔
1

امریکہ کی ریاست ٹیکساس کے فوجی اڈے "فورٹ ہُڈ" میں ایک فوجی سکیورٹی پر مامور ہے۔

اس بیس میں ایک فوجی نے فائرنگ کر کے تین اہلکاروں کو ہلاک اور 16 افراد کو زخمی کر دیا۔
2

اس بیس میں ایک فوجی نے فائرنگ کر کے تین اہلکاروں کو ہلاک اور 16 افراد کو زخمی کر دیا۔

کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل ملی نے بتایا کہ فائرنگ کرنے والا اہلکار نفیساتی دباؤ کا شکار ہونے کی وجہ سے ان دنوں زیر علاج تھا۔
3

کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل ملی نے بتایا کہ فائرنگ کرنے والا اہلکار نفیساتی دباؤ کا شکار ہونے کی وجہ سے ان دنوں زیر علاج تھا۔

صدر براک اوباما نے اس حملے پر افسوس کا اظہار کیا اور زخمی ہونے والوں کے خاندانوں سے اظہار ہمدردی بھی کیا۔
4

صدر براک اوباما نے اس حملے پر افسوس کا اظہار کیا اور زخمی ہونے والوں کے خاندانوں سے اظہار ہمدردی بھی کیا۔

مزید لوڈ کریں

XS
SM
MD
LG