رسائی کے لنکس

امریکی عہدیداروں کے مطابق جن قیدیوں کو رہا کیا گیا اُن میں سے دو کا تعلق افغانستان سے جب کہ دیگر یمن کے شہری ہیں۔

امریکی حکام نے تصدیق کی ہے کہ کیوبا میں قائم فوج کے حراستی مرکز گوانتاناموبے سے 10 قیدیوں کو رہا کر کے عمان منتقل کر دیا گیا ہے۔

اس سے قبل عمان کی وزارت خارجہ نے کہا تھا کہ اُن کے ملک نے امریکی انتظامیہ کی درخواست پر ان قیدیوں کو لینے پر آمادگی ظاہر کی تھی۔

گوانتاناموبے سے رہا کیے جانے والے قیدیوں کو عموماً اصلاحی مراکز میں رکھا جاتا ہے۔

امریکی عہدیداروں کے مطابق جن قیدیوں کو رہا کیا گیا اُن میں سے دو کا تعلق افغانستان سے جب کہ دیگر یمن کے شہری ہیں۔

یمن میں جاری خانہ جنگی اور سلامتی کی صورت حال کی وجہ سے اس ملک کے قیدیوں کو امریکی وزارت دفاع ’پینٹاگان‘ براہ راست واپس یمن نہیں بھیجتی۔

وائٹ ہاؤس کے ترجمان جوش ارنسٹ نے منگل کو تسلیم کیا کہ گوانتاناموبے حراستی مرکز کو بند کرنے کے بارے میں صدر اوباما کا ہدف مکمل نہیں ہو سکا۔

صدر اوباما نے اس عزم کا اظہار کیا تھا کہ وہ اپنی مدت صدارت کے دوران گوانتاناموبے میں قائم حراستی مرکز کو بند کر دیں گے لیکن اُن کی دوسری مدت رواں ہفتے ختم ہو رہی ہے۔

10 مزید قیدیوں کی رہائی کے بعد اب گوانتاناموبے میں 45 قیدی باقی رہے گئے ہیں۔

XS
SM
MD
LG