رسائی کے لنکس

متحدہ عرب امارات کا جنگی طیارہ یمن میں لاپتا


یمنی شہری صنعا میں سعودی اتحاد کی جانب سے ایک فضائی کارروائی کے بعد نقصان کا جائزہ لے رہے ہیں۔ فائل فوٹو

یمنی شہری صنعا میں سعودی اتحاد کی جانب سے ایک فضائی کارروائی کے بعد نقصان کا جائزہ لے رہے ہیں۔ فائل فوٹو

یمن میں سعودی قیادت میں فضائی مہم شروع ہونے کے بعد اس اتحاد کے کم از کم دو طیارے گر کر تباہ ہو چکے ہیں۔

متحدہ عرب امارات کی فوج نے سرکاری خبر رساں ادارے ’ڈبلیو اے ایم‘ کو دیے گئے ایک بیان میں پیر کو کہا ہے کہ یمن میں متحدہ عرب امارات کا ایک جنگی جہاز لاپتا ہو گیا ہے۔

تاہم اس کی مزید تفصیلات نہیں بتائیں گئیں۔

فوج نے ایک مختصر بیان میں کہا کہ جنگ میں شریک جہاز ’’لاپتا‘‘ ہو گیا ہے۔

ایک سال قبل سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں نے یمن کے صدر عبدالربہ ھادی کا اقتدار بحال کرنے کے لیے یمن میں فضائی کارروائیاں شروع کی تھیں۔ صدر ھادی کو یمن کے معزول صدر علی عبداللہ صالح کے حامی حوثی باغیوں نے اقتدار سے الگ کر دیا تھا۔

سعودی اتحاد کی طرف سے اس سلسلے میں کوئی بیان جاری نہیں ہوا۔

یمن میں فضائی مہم شروع ہونے کے بعد سعودی اتحاد کے کم از کم دو طیارے گر کر تباہ ہو چکے ہیں۔

مئی 2015 میں مراکش کا ایف سولہ جنگی جہاز یمن میں ایک پرواز کے دوران گر کر تباہ ہوا۔ حوثیوں کا کہنا تھا کہ قبائلیوں نے طیارے کو مار گرایا۔

دسمبر میں بحرین کا ایف سولہ جنگی جہاز یمن کے ہمسایہ ملک سعودی عرب میں تکنیکی خرابی کے باعث گر کر تباہ ہوا۔

XS
SM
MD
LG