رسائی کے لنکس

شیعہ عالم کی پھانسی کے بعد کشیدگی

سعودی عرب نے ایران کے ساتھ اپنے سفارتی تعلقات منقطع کرتے ہوئے ریاض سے سفارتی عملے کو دو روز میں واپس چلے جانے کا کہا ہے۔ یہ اقدام ہفتہ کو سعودی حکومت کے بڑے ناقد شیعہ عالم شیخ نمر النمر کی سزائے موت پر عملدرآمد کے بعد پیدا ہونے والی صورتحال کے تناظر میں کیا گیا۔ ایران نے نمر کی موت پر شدید ردعمل کا اظہار کیا تھا۔
مزید

ایران نے شیعہ عالم شیخ نمر النمر کی موت پر شدید ردعمل کا اظہار کیا۔
1

ایران نے شیعہ عالم شیخ نمر النمر کی موت پر شدید ردعمل کا اظہار کیا۔

سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر نے اتوار کو دیر گئے اعلان کیا کہ تمام ایرانی سفارتکار 48 گھنٹوں میں سعودی عرب سے چلے جائیں۔
2

سعودی وزیر خارجہ عادل الجبیر نے اتوار کو دیر گئے اعلان کیا کہ تمام ایرانی سفارتکار 48 گھنٹوں میں سعودی عرب سے چلے جائیں۔

تہران میں مظاہرین نے سعودی سفارتخانے پر دھاوا بول کر وہاں توڑ پھوڑ بھی کی۔
3

تہران میں مظاہرین نے سعودی سفارتخانے پر دھاوا بول کر وہاں توڑ پھوڑ بھی کی۔

النمر پر 2014 میں بغاوت اور دیگر جرائم میں ملوث ہونے کے جرم میں سزائے موت سنائی گئی تھی جس پر ہفتہ کو دیگر 46 مجرموں کے ساتھ کے ساتھ عملدرآمد کیا گیا۔
4

النمر پر 2014 میں بغاوت اور دیگر جرائم میں ملوث ہونے کے جرم میں سزائے موت سنائی گئی تھی جس پر ہفتہ کو دیگر 46 مجرموں کے ساتھ کے ساتھ عملدرآمد کیا گیا۔

مزید لوڈ کریں

XS
SM
MD
LG