رسائی کے لنکس

logo-print

مصر کی اسرائیل اور فلسطینیوں سے جنگ بندی کی اپیل


مصر کے وزیر اعظم حشام قندیل حماس کے اپنے ہم منصب کے ہمراہ غزہ کے دورے کے موقع پر

اسرائیل نے فضائی حملوں کا نشانہ بننے والے علاقوں میں مسٹر قندیل کے دورے کے دوران عارضی فائربندی کردی تھی۔

مصر کے وزیر اعظم نے کہا ہے کہ ان کا ملک غزہ پر اسرائیلی جارحیت روکنے کے لیے اسرائیل اور فلسطینوں کے درمیان جنگ بندی کے معاہدے کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھے گا ۔

مصر کے وزیر اعظم حشام قندیل نے ان خیالات کا اظہار جمعے کو ایک مختصر دورانیے کی فائربندی کے دوران غزہ میں کیا۔

اسرائیل نے فضائی حملوں کا نشانہ بننے والے علاقوں میں مسٹر قندیل کے دورے کے دوران عارضی فائربندی کردی تھی۔

مصر کے وزیر اعظم نے کہا کہ مصر ، فلسطینوں کے خلاف جارحیت روکنے کے لیے ہر ممکن اقدام کرے گا اور اس کی یہ کوشش ہوگی کہ جنگ بندی کا معاہدہ روبہ عمل رہے تاکہ ایک ایسی فلسطینی ریاست کا قیام ممکن ہو سکے، جس کا دارالحکومت یروشلم ہو۔ خطے میں امن کے استحکام کا یہ واحد راستہ ہے۔


اسرائیل کی فوج نے کہاہے کہ اس نےمسٹر قندیل کے غزہ میں قیام کی مدت میں وہاں کو ئی حملہ نہیں کیا، اگرچہ اس دوران حماس کے عسکریت پسندوں نے اسرائیل پر 50 راکٹ فائر کیے۔

لیکن حماس کے ذرائع کا کہناہے کہ جمعے کے روز اسرائیل نے شمالی غزہ پر ایک بم گرایا جس سے دو فلسطینی ہلاک ہوگئے۔

اس ہفتے کی لڑائیوں میں 20 فلسطینی اور تین اسرائیلی ہلاک ہوچکے ہیں۔

اسرائیل نے اس سے قبل کہاتھا کہ مصر کے وزیر اعظم قندیل کے غزہ کے دورے کے دوران وہ اپنے فوجی حملے معطل کردے گا۔
XS
SM
MD
LG